لاہور کی سڑک پر ظالمانہ سلوک

لاہور کی سڑک پر ظالمانہ سلوک


لاہور (24نیوز) لاہورکی ایک سٹرک پرظالمانہ کھیل کھیلا گیا,سنگ دل مالک نے کمسن بچے کوگاڑی کی ڈگی میں بندکئے رکھا۔ بچہ نیم کھلی ڈگی میں بے بسی کی تصویربنارہا۔
انسانیت شرما گئی مگر زمین نہ پھٹی , لاہور کی بیدیاں روڈ پر کھلے عام ظالم مالک نے ننھے ملازم کو سیٹرھی کی حفاظت کیلئے گاڑی کی ڈگی میں بند کئے رکھا ۔ چلتی گاڑی میں کم سن ملازم نیم کھلی ڈگی میں بے بسی سے امید کی کرن تکتا رہا۔تاہم ظالم بےحس مالک کو ترس نہ آیا ,محض ایک سیٹرھی کی حفاظت کے لئے ملازم کی زندگی کو خطرے میں ڈالا گیا۔

فوٹیج بنانے والی خاتون سے مالک نے تلخ کلامی کے ساتھ موبائل فون چھیننے کی کوشش بھی کی ۔ خاتون باز نہ آئی تو سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دیتا رہا۔ فوٹیج میں گاڑی کا نمبر بھی واضح دیکھا جا سکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  نواز شریف،مریم نواز کے ساتھ ”ہاتھ“ہوگیا

اس حوالے سے سٹی فورٹی ٹو سے گفتگو کرتے ہوئے چیئرپرسن چائلڈ پروٹیکشن بیورو صباء صادق کا کہنا تھا کہ اگر یہ کسی امیر کا بچہ ہوتا تو شاید فرنٹ سیٹ پر بیٹھا ہوتا ۔ حکومت اور چائلڈ پروٹیکشن بیورو ایسے واقعات کو کم کرنے کے لئے کوشاں ہے۔
اب سوال یہ ہے کہ کب تک اس طرح کے واقعات آنکھوں کو نم کرتے رہے گےاور آخر کب تک بے حسی انسانیت پر غالب رہے گی ۔ 

ڈی آئی جی آپریشنز حیدر اشرف نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے فوری انکوائری کا حکم دے دیا۔