اسلام میں جبر نہیں ، پتہ نہیں معاشرہ کیسے چلے گا: سپریم کورٹ

اسلام میں جبر نہیں ، پتہ نہیں معاشرہ کیسے چلے گا: سپریم کورٹ


اسلام آباد (24 نیوز)سپریم کورٹ میں فیض آباد دھرنے کے خلاف از خود نوٹس کی سماعت ، وزارت دفاع اور داخلہ نے رپورٹ پیش کر دیں ، جسٹس فائز عیسیٰ نے ریمارکس دیئے کہ اسلام میں جبر نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں فیض آباد دھرنے کیخلاف ازخود نوٹس کیس کی سماعت ہوئی جس کے دوران وزارت دفاع اور وزارت داخلہ نے رپورٹ پیش کر دی ۔

عدالت عظمیٰ کے جج جسٹَس فائز عیسیٰ نے ریمارکس دیئے کہ اسلام میں جبر نہیں ہے ، ڈنڈے کے زور پر اچھی بات بھی بری لگتی ہے۔

انھوں نے کہا کہ سمجھ نہیں آ رہا ہے کہ معاشرہ کیسے چلے گا۔