پنجاب یونیورسٹی میں سنٹر فار کول ٹیکنالوجی کا توسیعی منصوبہ مکمل

پنجاب یونیورسٹی میں سنٹر فار کول ٹیکنالوجی کا توسیعی منصوبہ مکمل


 لاہور(24نیوز): پنجاب یونیورسٹی میں جاری سنٹر فار کول ٹیکنالوجی کا توسیعی منصوبہ مکمل کر لیا گیا، سنٹر میں توانائی کی پیداوار کے جدید ترین طریقوں پر ریسرچ کے لیے لیبز کی بھی تعمیر کی گئی ہے۔منصوبہ کی تکمیل پر افتتاح وزیر ہائیر ایجوکیشن سید رضا علی گیلانی نے کیا ۔ 

سنٹر فار کول ٹیکنالوجی کے توسیعی منصوبے پر اٹھارہ کروڑ بیس لاکھ روپے لاگت آئی ہے جس کا افتتاح وزیر ہائیر ایجوکیشن سید رضا علی گیلانی نے کیا ہے۔ اس سنٹر میں بجلی پیدا کرنے کے لیے کوئلوں کی اقسام کو ٹیسٹ کرنے کے لیے سات جدید ترین لیبز بھی بنائی گئی ہیں جن میں 14 کروڑ روپے مالیت کی مشینری رکھی ہے۔ وزیر ہائیر ایجوکیشن نے تمام ریسرچ لیبز کا دورہ کرنے کے بعد تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ توانائی کی ضروریات پورا کرنے کے لیے ریسرچ منصوبے اہمیت کے حامل ہیں۔

تقریب سے خطاب میں سنٹر کے ڈائریکٹر ڈاکٹر شاہد مُنیر نے بتایا کہ کوئلے کی مدد سے آئندہ پانچ سو سال تک کے لیے بجلی کی پیداوار ممکن ہے اور اس سنٹر میں کوئلے پر ریسرچ کرنے میں معاونت ہوگی۔

پنجاب یونیورسٹی کے سنٹر فار کول ٹیکنالوجی کے توسیعی منصوبے میں قائمقام وائس چانسلر ڈاکٹر ظفر معین، لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ محمد اکرم خاں، قمر الاسلام راجہ، چیئرپرسن پی ایچ ای سی ڈاکٹر نظام الدین سمیت ریسرچ سکالرز نے بھی شرکت کی۔