یوٹرن کیا ہوتا ہے؟ اسد عمر نے شہباز شریف کو کھری کھری سنادیں



اسلام آباد( 24نیوز )قومی اسمبلی کا اجلاس پارلیمنٹ ہاﺅس میں جاری ہے،ارکان اسمبلی مختلف ایشوز پر گرما گرم تقاریر کررہے ہیں۔

اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ چینی قونصلیٹ پر حملے پر وزیر خارجہ نے ایوان کو جامع طریقے سے اعتماد میں لیا واقعہ پر پوری قوم میں تشویش کی لہر دوڑی ہے ،چائنہ ان چند ممالک میں شامل ہے جو پاکستان کے برے وقتوں میں ساتھ کھڑے ہوتے ہیں کسی کو شک نہیں چائنہ پاکستان کا نہایت قابل اعتماد دوست ہے پولیس اور رینجرز کے زبردست ایکشن کی بدولت تمام چینی محفوظ ہی، سی پیک کو متنازعہ بنانے کی کوشش کی گئی جو ناکام ہوئی اگر آج پی ٹی آئی سی پیک پر یکسو ہے تو یہ خوش آئند ہے، چینی قونصل خانے پر حملے کے واقعے کی تحقیقا کرائی جائیں، دنیا کو بتانا چاہئے کہ پاک چین دوستی کو میلی آنکھ سے دیکھنے والوں کو قوم روند دے گی۔

ویڈیو دیکھیں:

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کا بیان آیا کہ یوٹرن لینا بڑے لیڈرز کی حکمت عملی ہے، وزیراعظم نے ہٹلر کا نام بھی لیا اگر یوٹرن لینا بڑے لیڈر کی نشانی ہے، جس کا وزیراعظم دفاع کر رہے ہیں مجھے بتائیے جوہری ملک کے بارے میں دنیا کیا سوچے گی کون ملک ہم پر اعتبار کرے گا کہ معاہدے کرے کہ یہ تو یوٹرن لے لیں گے شاہ محمود قریشی کل کو کسی ملک کے ساتھ معاہدہ کر کے آئیں اور وزیراعظم کہے یہ کالعدم ہے،وزیراعظم کے یوٹرن موقف سے پاکستان کا نقصان ہو رہا ہے ان کے ہاتھ بائیس کروڑ عوام کا مستقبل ہے اب تو سمجھداری کا ثبوت دیں ۔

ویڈیو دیکھیں:

وزیر اعظم نے کوالالمپور میں جو بیان دیا کہ پوری اپوزیشن جیل جائے گی آپ ڈکٹیٹر نہیں سلیکٹڈ وزیراعظم ہیں۔ آپ تڑیاں دیتے ہیں ہم نے تو ڈکٹیٹرز کا مقابلہ کیا، پیپلز پارٹی کی لیڈرشپ نے کوڑے کھائے، شہادتیں دیں ہمیں دھمکیاں نہ دی جائیں، ڈرائیں دھمکائے نہیں ہم ان گلیوں سے کئی مرتبہ گزر چکے ہیں، مشکل وقت کا سامنا کرنا جانتے ہیں این آر او کے بارے میں وزیراعظم نے گزشتہ دنوں بیان دیا جس پر پہلے بھی بات کر چکا میں نے کہا تھا عمران خان صاحب آپ کو کس نے این آر او کے بارے میں کہا وہ کون تھے جنہوں نے آپ کے کان میں این آر او کا بتایا، جو گواہ ہیں اس کے میں دہرانا نہیں چاہتا مگر جب وزیراعظم غیر ذمہ دارانہ بات کریں گے تو ایوان میں بات ہو گی مجھ پر ملتان میٹرو اور دیگر منصوبوں میں کرپشن کےالزامات لگائے گئے مگر آج تک ان الزامات کے ثبوت نہیں دیئے گئے این آر او تو اپنی ہمشیرہ علیمہ خان کو عمران خان نے دیا۔

حکومت ایسے فیصلے نہیں کرے گی جیسے مسلم لیگ نون کی:اسد عمر

وزیر خزانہ اسد عمر نے جواب میں کہا کہ اپوزیشن لیڈر کو خدشہ ہے کہ شاید وزیر اعظم کے بیان سے سرمایہ کاروں کے ذہن میں شکوک و شبہات پیدا ہوں، اپوزیشن لیڈر کو یقین دلانا چاہتا ہوں حکومت ایسے فیصلے نہیں کرے گی جیسے مسلم لیگ نون کیے، ان کی حکومت نے لوگوں کے اکاونٹ فریز کئے اربوں ڈالر منجمد کیے، پہلااین آراو وہ تھاجب ایک ڈکٹیٹر کے ساتھ معاہدہ ہوااور7 سال کوئی فیصلے نہ ہوسکے،آپ نے معاہدہ کیا اور پارٹی رہنماوں کو چھوڑ کرباہر چلے گئے،ن لیگ نے پاکستان کی تاریخ میں 101فیصد ڈیزل پر ٹیکس تھااس حکومت نے ڈیزل پر ٹیکس 5گنا کم کیا۔

ویڈیو دیکھیں:

شہباز شریف کہتے ہیں کہہ قطرہ بھی نظر نہیں آیا کہ بیرونِ ملک پاکستانی پیسہ بھیجیں گے، تین ماہ کے اندر ساڑھے پندرہ فیصد جو بیرون ملک پاکستانی پیسہ بھی اس میں اضافہ ہوا، آخری مہینے میں 20 فیصد اضافہ ہوا ،صرف تین ماہ کے اندر ایک ارب ڈالر اضافی وہ بھیجے جا چکے ہیں، میں نے سی پیک پر بات نہیں کی،سی پیک پر مزید بات نہیں کرناچاہیے کیونکہ اس سے پڑوسی ملک میں بے اعتمادی پیداہوگی۔

آج ایوان کو آئی ایم ایف پروگرام پر اعتماد میں لینے آیا تھا ،سی پیک پر سیاست نہ کی جائے میں نے آج تک سی پیک کے خلاف بات نہیں کی یو ٹرن کی بات کی گئی، یو ٹرن کیا ہوتا ہے یو ٹرن وہ ہوتا ہے جب آپ زرداری صاحب کو سڑکوں پر گھسیٹنے کا اعلان کریں اور بعد میں انہی کا سہارا لیں ،اپوزیشن لیڈر اگر کہے گا کہ وزیر خزانہ سی پیک کے خلاف بات کرتا ہے تو چین کو مثبت پیغام نہیں جائے گا آمر کے دور میں جب سب کوڑے کھارہے تھے تب نواز شریف اس کے وزیر تھے۔

ویڈیو دیکھیں:

اظہر تھراج

Senior Content Writer