یوٹیلٹی اسٹورز ملازمین سےحکومتی مذاکرات ناکام، دھرنا جاری

یوٹیلٹی اسٹورز ملازمین سےحکومتی مذاکرات ناکام، دھرنا جاری


 اسلام آباد(24نیوز) یوٹیلٹی اسٹورزکے ملازمین کاادارے کی نجکاری، فنڈزکے اجراءاوربقایاجات کی ادائیگی نہ کرنے پر اسلام آبادمیں احتجاج جاری ہے، جبکہ وزیراعظم کے معاون خصوصی نعیم الحق کے مظاہرین سے مذاکرات ناکام ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق یوٹیلیٹی اسٹورزکےملازمین ادارے کی نجکاری کےخلاف سراپا احتجاج ہیں،ملک بھرسے آئے یوٹیلٹی اسٹورزملازمین اسلام آباد ہیڈ آفس کے سامنے علی الصبح جمع ہوئے اور ادارے کی مجوزہ نجکاری کے خلاف بھرپورنعرے لگائے ، مظاہرین نے بعد میں ڈٰی چوک کا رخ کیا ،مظاہرین کے مارچ کرنےپر پولیس اور رینجرز کی اضافی نفری طلب کرلی گئی ،ڈی چوک سے پارلیمنٹ کی جانب جانے والے راستے بند کر دئیے گئے۔

معاون خصوصی وزیراعظم نعیم الحق مظاہرین سے مذاکرات کے لئےپہنچے لیکن مظاہرین کی ایک نہ سنی،مظاہرین کے مطابق دوسال سے بقایا جات ادا نہیں کئے جارہے،تنخواہ اور الاؤنسز میں اضافہ اورنہ عارضی ملازمین کو مستقل کیا جارہا ہے، اب حکومت 14 ہزار خاندانوں کے معاشی قتل پرتلی بیٹھی ہے۔

مظاہرین کاکہنا تھا کہ مطالبات کی منظوری کے لئے جب تک تحریری طورپر یقین دہانی نہیں کرائی جاتی، دھرنا جاری رہےگا۔