پی ٹی آئی کا یوٹرن، خیبرپختونخوا حکومت کا بجٹ پیش کرنے کا فیصلہ


پشاور(24نیوز) عمران خان نےخیبرپختونخوا کابجٹ پیش نہ کرنےکافیصلہ واپس لےکرایک اوریوٹرن لےلیا۔صوبائی حکومت نے4مئی کو صوبائی اسمبلی کااجلاس بلاکر بجٹ پیش کرنےکافیصلہ کرلیا۔

تحریک انصاف کےچیئرمین عمران خان نے آئندہ مالی سال کے لیے خیبر پختونخوا کےبجٹ پر بھی یو ٹرن لےلیا۔ صوبائی حکومت نےمالی سال 2018۔2019کابجٹ پیش کرنے کےلئے4مئی کواسمبلی اجلاس طلب کرلیا۔

ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ پرویز خٹک کو پہلے وزارت خزانہ نے بجٹ کے حوالے سے سمری ارسال کی تھی لیکن انھوں نے انکار کردیا تھا۔ گزشتہ روز دوبارہ سمری بھیجی گئی جس پر پرویز خٹک نے دستخط کردیے۔

یہ بھی پڑھیں: " نیب مارشل لاءکا کالا قانون ہے، ختم نہ کرکے غلطی کی"

پرویز خٹک کے ترجمان نے کہا ہے کہ ترقیاتی کاموں کوجاری رکھنے کی لیے بجٹ پیش کرنے کا فیصلہ کیاگیا ہے۔ انھوں نے کہا بجٹ کے حوالے سے عمران خان کو آگاہ کردیا ہے۔

وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے کہا کہ کوشش ہوگی حکومت اور اپوزیشن مل کر بجٹ پیش کریں۔ انھوں نے کہا کہ اپوزیشن سے رابطہ کرنے کے لیے اسد قیصر کے زیر نگرانی میں کمیٹی بنائی گئی ہے۔

پڑھنا مت بھولیں: امریکی سفارت کار کرنل جوزف کا نام بلیک لسٹ میں شامل

یاد رہے پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان اس سے پہلے واشگاف الفاظ میں اعلان کرچکے تھے کہ خیبرپختونخوا حکومت آئندہ مالی سال کا بجٹ پیش نہیں کرے گی۔