کلبھوشن کے اہلِ خانہ 25دسمبر کو پاکستان آئیں گے،بھارت کا باضابطہ جواب


اسلام آباد (24 نیوز) بھارتی دہشتگرد کلبھوشن یادیو کی اہلخانہ سے ملاقات کا معاملہ طے پا گیا۔ بھارت نے پاکستان کو باضابطہ طور پر آگاہ کر دیا۔ کلبھوشن کی اہلیہ اور والدہ 25 کو ملاقات کے لیے آئیں گی اور واپسی بھی اسی روز ہو گی۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان میں جاسوسی اور دہشتگردی کےواقعات میں ملوث بھارتی دہشتگرد کلبھوشن یادیو کی والدہ اور اہلیہ سے ملاقات 25 دسمبر کو اسلام آباد دفترخارجہ میں ہوگی۔

ترجمان دفترخارجہ ڈاکٹر فیصل نے واضح کیا کہ بھارت نے کلبھوشن یادیو کی اہلیہ اور والدہ کی سفری تفصیلات سے آگاہ کر دیا ہے۔ کلبھوشن کے اہل خانہ پیر کی صبح کمرشل پرواز سے اسلام آباد پہنچیں گے۔ بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ کلبھوشن یادیو کے اہل خانہ کے ہمراہ ہوں گے۔

یہ بھی پڑھئے: کلبھوشن یادیو سے والدہ، بیوی کی ملاقات کا معاملہ طے نہ ہو سکا

ذرائع کے مطابق نیٹادھر دفترخارجہ میں کلبھوشن کی والدہ اور اہلیہ سے ملاقات کے لیے تیاریاں مکمل کر لی گئیں ہیں۔ ملاقات کا دورانیہ 15  منٹ سے 1 گھٹے پر مشتمل ہو گا۔ بھارتی جاسوس کی والدہ اوراہلیہ چاہیں تومیڈیا سے بات کر سکیں گی اور ترجمان کے مطابق کلبھوشن سے ملاقات کے بعد ان کی والدہ اور اہلیہ اسی روز واپس چلی جائیں گی۔

سفارتی ذرائع کےمطابق کلبھوشن کی والدہ اوراہلیہ سے ملاقات آخری نہیں ہوگی۔ کلبھوشن ایک جاسوس، دہشتگرداورتخریب کار ہے، جس کے ثبوت موجود ہیں۔ اس کے درجنوں پاکستانی سہولت کار بھی گرفتار کیے ہیں۔ بھارتی جاسوس کی رحم کی اپیل پر پہلے آرمی چیف اوربعد میں صدر پاکستان حتمی فیصلہ دیں گے۔