سعودی عرب میں خواتین کیلئے بڑی خوشخبری


ریاض (24نیوز) سعودی عرب میں نئی تاریخ لکھی گئی۔ سعودی خواتین نے تنہا کاریں چلانا شروع کردیں۔
اٹھائیس سال بعد پہلی بار سعودی خاتون نے گاڑی چلائی، عربی گیت بھی سنا۔ارب پتی شہزادہ ولید بن طلال کی بیٹی ریم نے بھی والد اور بیٹیوں کو ساتھ بٹھا کر کار چلائی۔سعودی خواتین کو آزادی تو ملی لیکن حکومت کی طرف سے انہیں خبردار کیا گیا ہے کہ اگر دوران ڈرائیونگ سیلفی بنائی تو دو سے پانچ برس قید اور ایک سے تین لاکھ ریال جرمانہ ہوگا۔