برطانوی وزیراعظم آبدیدہ ہو گئیں



لندن(24نیوز) برطانوی وزیراعظم نے 7جون کوعہدہ چھوڑنے کا اعلان کر دیا، تھریسامے کوبریگزٹ پر پارٹی کی مخالفت کا سامنا تھا، تھریسامے عہدہ چھوڑنے کے اعلان پر آبدیدہ ہو گئیں۔

تفصیلات کے مطابق اپنے خطاب میں برطانوی وزیراعظم تھریسامےنے7جون کوعہدہ چھوڑنے کا اعلان کر دیا،ان کایہ کہناتھا کہ وہ اس بات سے شدید مایوس ہیں کہ وہ بریگزٹ نہیں کروا سکیں، عہدہ سنبھالتے ہی یہ مقصد اپنایا کہ کسی برطانیہ کے لوگوں کو مساوی اور یکساں حقوق فراہم ہوں، بریگزیٹ ڈیل پر ارکان کوقائل کرنےمیں ناکام رہی ، بطورجمہوری لیڈرعوام کی رائےکااحترام میری ذمہ داری ہے۔

برطانوی وزیراعظم کاکہناتھاکہ سنہ 2016 میں یورپی یونین ریفرینڈم کی ساکھ بچانے کی پوری کوشش کی،7 جون کو کنزرویٹو پارٹی کے قائد کی حیثیت سے مستعفی ہو رہی ہوں، ان کاکہناتھاکہ آئندہ ہفتے نئے وزیرِاعظم کی انتخاب کا عمل شروع ہو جائے گا، یہ واضح ہو چکا ہے کہ برطانیہ کے بہترین مفاد میں یہی بہتر ہے کہ کوئی نیا وزیر اعظم ملک کی قیادت کرے۔

اپنے مستعفیٰ ہونے کا اعلان کرتے ہوئے وہ آبدیدہ ہوگئیں اور خطاب چھوڑ کرچلی گئیں،وزیراعظم تھریسامے  3 جون کوامریکی صدرکے برطانوی دورے کی میزبانی کریں گی۔