حیدرآباد کے شہریوں پر مچھروں کا حملہ


حیدرآباد (24نیوز) مچھروں نے مقامی آبادی کو گھیر لیا، اسپرے ہونے سے شہری ملیریا میں مبتلا ہونے لگے ہیں، صورتحال پر متعلقہ حکام خاموش تماشائی بنے ہیں۔

اسے بلدیہ حیدرآباد کی نا اہلی کہیں یا وسائل کی کمی، صفائی کے ناقص انتظامات اور بروقت مچھر کش اسپرے نہ ہونے سے روزانہ درجنوں شہری ملیریا کے مرض میں مبتلا ہورہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: اگر آپ ذہنی دباؤ کا شکار ہیں تو یہ خبر پڑھ لیں

شہر کی 96 یوسیز کیلئے صرف تین پمپ دستیاب ہیں، جو مچھروں کا خاتمہ کرنے کیلئے ناکافی ہیں،طبی ماہرین کے مطابق ملیریا مختلف نوعیت کا ہوتا ہے، بروقت علاج نہ ہونے سے یہ مرض جنا لیوا ثابت ہوسکتا ہے ۔

بلدیہ والوں نے دعوی کیا ہے کہ رواں ماہ مچھر مار اسپرے شروع کر دیا جائے گا، لیکن بلدیہ والوں کے دعوے، دعوے ہی رہے، نہ تو اسپرے مہم شروع ہوئی، نہ ہی گندگی کے ڈھیر ٹھکانے لگائے جاسکے، ان حالات میں ملیریا سے چھٹکارا پانا آسان نہیں نظر آرہا ۔