مشہورومعروف اداکارہ مدیحہ گوھر انتقال کرگئیں

مشہورومعروف اداکارہ مدیحہ گوھر انتقال کرگئیں


لاہور (24نیوز)ٹیلی ویژن، فلم اور اسٹیج اداکارہ مدیحہ گوہر 62 سال کی عمر میں انتقال کرگئیں۔

مدیحہ گوہر کو کینسر کا مرض لاحق تھا۔ 3 سال کینسر کے مرض سے لڑتے لڑتے آخرکار ہمت ہارتے ہوئے وہ اپنے خالق حقیقی سے جاملیں۔ ان کی نماز جنازہ کل شام بروز جمعرات کو ان کی رہائش گاہ 24 سرور روڈ کینٹ میں ادا کی جائے گی۔

مدیحہ گوھر 1956 کو کراچی میں پیدا ہوئیں۔ انہوں نے انگلش ادب میں ماسٹر کی ڈگری حاصل کی اور تعلیم حاصل کرنے انگلینڈچلی گئیں جہاں انہوں نے لندن یونیورسٹی میں تھیٹر سائنس میں ماسٹر کی ڈگری حاصل کی۔

یہ بھی پڑھیں: تاوان کیلئے اغواہونے والا بچہ حیدرآباد سے بحفاظت بازیاب

1983 میں وطن واپسی کے بعد مدیحہ گوہر اور اس کے شوہر ڈائریکٹر شاہد ندیم نے لاہور میں "اجوکا" تھیٹر قائم کیا۔ جہاں انھوں نے اداکاری کے ساتھ ساتھ سکرپٹ بھی لکھے۔

اداکارا نے پاکستان سمیت بنگلہ دیش،  بھارت، سری لنکا، نیپال اور برطانیہ میں ابھی اداکاری کی۔ وہ نہ صرف فنکارہ تھیں بلکہ انھوں نے سماجی کام بھی کیا اور حقوق نسواں کے لیے اپنی آواز بلند کی۔

 انھیں 2005 میں بہترین اداکارہ کا ایوارڈ ملا۔2006میں انہیں نیدرلینڈ میں 'پرنس کلوڈ ایوارڈ' سے نوازا گیا اور 2007 میں انہوں نے 'انٹرنیشنل تھیٹر پاستا ایوارڈ' اپنے نام کیا۔

2007 میں ان کے تحریر اور ڈائریکٹ کردہ تھیٹر ڈرامے ’برقع وگینزا‘ نے مقبولیت میں اضافہ کیا، جس میں انھوں نے برقعے کا استعمال کیااور دکھایا کہ  معاشرے میں کس حد تک منافقت ہے۔