ن لیگی حکومت کے کارنامے،آخر ی بجٹ خسارہ 6.6فیصد چھوڑا

ن لیگی حکومت کے کارنامے،آخر ی بجٹ خسارہ 6.6فیصد چھوڑا


اسلام آباد( 24نیوز )نون لیگی حکومت کے آخری سال بجٹ خسارہ چھ اعشاریہ چھ فیصد رہا ، آمدن اور اخراجات کے درمیان فرق 2260 ارب روپے ہوگیا، سود کی ادائیگیوں پر 1499 ارب روپے خرچ کیے گئے۔
مسلم لیگ نون کی حکومت کے آخری سال ملکی معیشت شدید بحران کا شکار رہی۔ حکومتی اخراجات اور آمدن میں فرق کئی گنا تک بڑھ گیا۔وزارت خزانہ کی جانب سے جاری کیے گئے اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ برس کل آمدن 5228 ارب روپے رہی جب کہ اخراجات 7488 ارب روپے سے بھی بڑھ گئے حکومت کا بجٹ خسارہ 2260 ارب روپے رہا۔ وزارت خزانہ کے مطابق 30 جون تک بجٹ خسارہ 6.6 فیصد رہا جو کہ مقررہ ہدف سے زیادہ ہے۔
وزارت خزانہ کا کہنا ہے کہ گذشتہ برس 4467 ارب روپے کا ٹیکس اکٹھا کیا گیا اس دوران وفاق نے 4065 ارب اور صوبوں نے 401 ارب روپے کا ٹیکس اکٹھا کیا 30 جون تک 5854 ارب روپے کے جاری اخراجات کیے گئے سود کی ادائیگیوں پر 1499 ارب روپے خرچ کیے گئے جب کہ دفاع پر 1030 ارب روپے خرچ کیے گئے ترقیاتی منصوبوں پر 1456 ارب روپے خرچ کیے گئے وفاق نے ترقیاتی منصوبوں پر 576 ارب جب کہ صوبوں نے 880 ارب روپے خرچ کیے۔