اقوام متحدہ کے ہیڈکوارٹر کے سامنے کشمیریوں کا احتجاج

اقوام متحدہ کے ہیڈکوارٹر کے سامنے کشمیریوں کا احتجاج


( 24نیوز ) اقوام متحدہ کے ہیڈکوارٹر کے سامنے کشمیریوں نے بھرپور مظاہرہ کیا، ہندوستان دہشت گرد کے نعرے لگائے اور اقوام متحدہ سے اپنی قراردادوں پر عمل کرانے کا مطالبہ کیا۔

وزیراعظم آزادکشمیر کی قیادت میں اقوام متحدہ کے ہیڈ کوارٹرز کے سامنے کشمیریوں نے احتجاجی مظاہرہ کیا،مظاہرین نے ہندوستان کے خلاف شدید نعرے لگائے، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل خطے کو ہولناک انسانی حادثے سے بچانے کے لیے اپنی قراردادوں پر عملدرآمد کروائے۔

وزیراعظم آزادکشمیر  راجہ فاروق حیدر نے خطاب میں کہا کہ مقبوضہ کشمیر کے اندر بدترین لاک ڈاؤن ہے، وادی کو جیل بنا دیا گیا، اقوام متحدہ اپنا کردار ادا کرے، ہندوستان مقبوضہ کشمیر میں انسانیت کے خلاف جنگی جرائم کررہا ہے، ہندوستان مقبوضہ کشمیر میں انسانیت کے خلاف جنگی جرائم کررہا ہے۔

80 لاکھ لوگوں کےمتعلق کوئی اطلاع نہیں کہ کس حال میں ہیں انہیں قید کردیا گیا ہے،انہیں ادویات مذہبی عبادات سے محروم رکھا جارہا ہے وہ شدید نفسیاتی دباؤ میں ہیں، مقبوضہ کشمیر میں بڑے پیمانے پر نسل کشی کا منصوبہ بنا لیا گیا ہے۔

راجہ فاروق حیدر کا کہناتھا کہ ہندوستانی فوج لائن آف کنٹرول پر معصوم کشمیریوں کو بھی قتل کررہی ہے، ہندوستان کی جانب سے آزادکشمیر پر حملہ کیا گیا تو اس سے بڑے پیمانے پر جنگ چھڑ سکتی ہے، ہندوستان مقبوضہ کشمیر میں بدترین انسانی حقوق کی پامالی کو چھپانے کے لیے ایسا کرسکتا ہے۔ 

مظاہرین نے کتبے اور پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے جن پر مقبوضہ کشمیر میں ہندوستانی مظالم کی تصاویر اور تحریریں تھیں،مظاہرین میں بڑی تعداد میں عورتیں اور بچے بھی شامل تھے۔