بلاول بھٹو نے حکومت کو آڑے ہاتھوں لے لیا،مودی کو بھی للکار



سکردو (24 نیوز)پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے ایک بار پھر مودی قاتل کا نعرہ لگا دیا، کہتے ہیں کشمیر کا مقدمہ ایک جمہوریت پسند ہی لڑ سکتا ہے، کوئی سلیکٹڈ نہیں، دنیا میں کہیں بھی جاؤں  گاکشمیر کاز پر آواز بلند کروں گا، وہ سکردو میں پریس کانفرنس کررہے تھے۔

بلاول بھٹو کا کامیاب دورہ سکردو ختم ہوگیا، روانگی سے قبل دھواں دھار پریس کانفرنس کی، مسئلہ کشمیر پر بھارت سرکار کو خوب لتاڑا، ساتھ ساتھ حکومتی پالیسیوں کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا۔

بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ آج مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کو دنیا کے سامنے اجاگر کرنے کی ضرورت ہے، نریندر مودی قاتل ہے،مقبوضہ کشمیر کو جیل بنا دیا گیا ہے،مودی نے کشمیر کو زیادہ فلیش پوائنٹ بنا دیا ہے، آج اقوام متحدہ کے پلیٹ فارم کو استعمال کرنے کا موقع ہے۔

بلاول بھٹو نے کشمیر کے ایشو پر تمام جماعتوں کو متحد ہونے کی ضرورت پر زور دیا۔انہوں نے کہا کہ جب سے ہوش سنبھالا کشمیر میں مظالم دیکھ رہا ہوں، ہمیں ایک دوسرے کی ٹانگیں نہیں کھینچنی، مل کر کشمیر کیلئے آوازاٹھانا ہےلیکن کشمیر کا مقدمہ ایک جمہوریت پسند ہی لڑ سکتا ہے کوئی سلیکٹڈ نہیں۔

چیئرمین پیپلزپارٹی نے پریس کانفرنس کے دوران حکومت اور وزیراعظم کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا۔کہتے ہیں کہ  پوری دنیا نے دیکھا عمران خان نے پاکستان میں جمہوریت پر حملہ کیا، عمران خان جو وعدہ کرتے ہیں، اس کا الٹ کرتے ہیں،اپوزیشن کو دیوار سے لگایا جارہا ہے، جانتے ہیں مقابلہ کیسے کیا جاتا ہے،حکومت بالکل نااہل ، کچھ پتہ نہیں کیا کرنا ہے، حکومت پیپلز پارٹی کے ہر اقدام کو فالو کرتی ہے۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ صرف پیپلزپارٹی وفاقی جماعت ہے جو عوام کے مسائل حل کرسکتی ہے،انہوں نے مریم نواز اور فریال تالپور کی گرفتاری کو بھی سیاسی انتقام کی بدترین مثال قرار دیا۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer