"شہباز شریف، نواز شریف سے بڑا چور ہے"



کراچی(24نیوز) وفاقی وزیرریلوے شیخ رشید کا کہنا ہے کہ30مارچ سے پہلے جھاڑو پھرنے والا ہے، ہماری بدنصیبی ہے چور چوکیدار بن گئے،ساری قوم کی جیبیں کاٹنے والے معزز بن گئےان کی شکلوں پر لکھا ہے کہ یہ ڈکیت ہیں،چور،ڈاکو اور لٹیرے قانون کے شکنجہ میں آگئے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں مزارقائد پرحاضری کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیرریلوے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ تیس مارچ سے پہلے جھاڑو پھرنے والا ہے، ہماری بدنصیبی ہے چور چوکیدار بن گئے، خانہ نمبر دو سے ایک میں آگئے، اس ملک کے 20 کروڑ لوگوں کی زندگی کو مشکل میں ڈالا، ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کی کوشش ہے کہ ملک کو لوٹنے والوں کو سلاخوں کے پیچھے لائیں، ان لوگوں کے کرتوت پیدائشی لیک وہچکے ہیں، ان کی شکلوں پر لکھا ہے کہ یہ بے ایمان ہےیہ بڑے لوگ نہیں جیب کترے ہیں۔

  شیخ رشید کا کہنا تھا کہ انہوں نے ساری قوم کی جیبیں کاٹی ہیں، بلاول کی والدہ کی وصیت نوکرانی کے بیگ سے ملی ،اب والد کی کہاں سے ملےگی پتہ نہیں؟عمران خان نے صاف کہا ہےکہہ این آر او نہیں ملے گا، دورہ چین کے بعد اس نتیجے پر پہنچا ہوں کہ شہباز شریف نواز شریف سے بڑا ڈاکو اور چور ہے،ان کا کہنا تھا کہپاکستانی سیاست میں وکٹ کے دونوں طرف کھیلنے والے کامیاب ہوسکتے ہیں، 30 مارچ سے  پہلے تھوڑی سی جھاڑو پھرنی والی ہے، ان کا کہنا تھا کہ میں تو ایک آوارہ کلاشنکوف رکھنے کے جرم میں 7 سال قید ہوا، یہ لوگ سارا ملک لوٹنے کے بعد قید ہوئے ہیں۔

ضرور پڑھیں:کھراسچ، 18 جون 2019

وفاقی وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی والے اور شیخ رشید چور نکلے تو انہیں 14 سال کی سزا ہونی چاہیے، جہانگیر ترین تحریک انصاف کا زبردست آدمی تھا جو کہ ایل بی ڈبلیو ہوگیا ہے، پاکستان کے خوبصورت شہر سکھر میں بد ترین سیاست دان بھی سکھر سے ہیں جو کہ خورشید شاہ ہِیں،خورشید شاہ کے چیخنے سے لگ رہا ہے کہ انکے پیچھےبھی کوئی شارک لگی ہوئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ میں اپنی زمین سکلر ریلوے کے متاثرین کو دینے کے لیے تیار ہوں اور انکو آباد کرنا سندھ حکومت کا کام ہے، ہم نے 20 نئی ٹرینیں چلائی ہیں اور آئندہ سال بھی 20 نئی ٹرینیں چلائیں گے، شیخ ہوں نا دھیرے دھیرے کاروائی کرونگا۔

ایان علی کے سوال پر   شیخ رشید کا کہنا تھا کہ پورٹر پورٹر ہوتا ہے چاہے کتنا حسین ہو، میرے تعلقات نمبر ون لوگوں سے ہوتے ہیں چھوٹے موٹے لوگوں سے بات نہیں کرتا، 35 ارب روپے کا خسارہ ریلوے کو جہیز میں ملا جبکہ 31 ارب روبے تنخواہ ہے.

M.SAJID KHAN

CONTENT WRITER