خیبرپختونخوا، وزراء کے درمیان اختلافات کھل کر سامنے آگئے

خیبرپختونخوا، وزراء کے درمیان اختلافات کھل کر سامنے آگئے


 پشاور(24 نیوز) سونامی ٹری منصوبے میں کرپشن اور دیگر الزامات پر پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس نہ ہونے پر سینئر وزیر عاطف خان وزیر اطلاعات پر برس پڑے۔

تفصیلات کے مطابق سونامی منصوبہ تحریک انصاف حکومت کے پہلے دور میں شروع ہوا۔ حکومت کا دعویٰ  ہے کہ اس منصوبے کے تحت صوبہ بھر میں تقریباً ایک ارب کے قریب درخت لگائے گئے۔ بیلن ٹریز منصوبہ سے متعلق پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس منسوخ کرنا شوکت یوسفزئی کو مہنگا پڑگیا، خیبرپختونخوا اسمبلی میں وزیر اطلاعات پر حکومت اور اپوزیشن کی تنقید کا سامنا کرنا پڑا۔سینئر وزیر عاطف خان نے بھی شوکت یوسفزئی پر فقرے کس دیے۔

صوبائی وزرراءکا کہنا تھا کہ بلین ٹری منصوبہ 22 ارب کا تھا ہم نے 14 ارب میں مکمل کیا منصوبے کی کامیابی کا تناسب 85 فی صد ہے بے قاعدگیوں پر دو چیف کنزرویٹوو اور 350 لوگوں کو نکالا جاچکا، ایسا پہلے کبھی کسی منصوبے میں نہیں ہوااپوزیشن کے پاس اس وقت کچھ نہیں ہے تو ہماری حکومت کو بدنام کرنے کی کوشش کررہی ہے۔