ن لیگ قائم مقام صدر کی نامزدگی کیلئے مجلس عاملہ کااجلاس کل ہوگا  


 اسلام آباد(24نیوز) حکمران جماعت ن لیگ کی مشکلات کم ہونے کا نام نہیں لے رہیں۔ پہلے نوازشریف وزیراعظم کےعہدےسے نااہل ہوئے پھرپارٹی صدرت بھی ان کے ہاتھ سے گئی۔ اب ن لیگ کو نئے پارٹی صدر کا انتخاب کرنا ہے لیکن اس میں بھی انہیں مشکلات کا سامنا ہے۔

تفصیلات کے مطابق حکمران جماعت کو اپنی مجلس عاملہ کا اجلاس بلوانے کے لیے بھی قانونی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ گیا۔ عدالتی فیصلے کے بعد اجلاس 2016 کی فہرست کے مطابق کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں:قانون سب کیلئے برابر،عدالتوں کا دہرا معیار ملک کیلئے نقصان دہ ہوگا,مریم اورنگزیب

مسلم لیگ ن کی مجلس عاملہ کا اجلاس منگل کے روز بلوایا گیا ہے۔ اجلاس میں قائم مقام صدر کی نامزدگی سمیت دیگر تنظمی امور پر مشاورت کی جائے گئی۔

 ذرائع کے مطابق اجلاس قانونی مشکلات کا شکار ہے عدالت فیصلے کے بعد 28 جولائی 2017 کے بعد کے میاں محمد نواز شریف تمام فصیلے کالعدم قرار دیئے گئے جس کے باعث حکمران جماعت کو اب منگل کے روز ہونے والا اجلاس 2016 کی ممبران پر مشتمل کمیٹی پر کروایا جائے گا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ تاحال متعدد ممبران کو اجلاس کی اطلاع ہی نہیں دی گئی۔