نیب کا حسن اور حسین نواز کو انٹرپول کے ذریعہ پاکستان واپس لانے کا فیصلہ

نیب کا حسن اور حسین نواز کو انٹرپول کے ذریعہ پاکستان واپس لانے کا فیصلہ


اسلام آباد ( 24 نیوز ) قومی احتساب بیورو ( نیب ) نے سابق وزیر اعظم نواشریف کےصاحبزادوں حسین نواز ، حسن نواز اور سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو وطن واپس لانے کا فیصلہ کرلیا۔ انٹرپول سے رابطہ کےلیے خط تیار کر لیا گیا۔ وزیراعظم کے سابق سیکرٹری فواد حسن فواد، سیکرٹری پنجاب نجم شاہ اور سیکرٹری ہیلتھ پنجاب علی جان کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش بھی کردی گئی۔
نیب ذرائع کے مطابق قومی احتساب بیورو نے سابق وزیراعظم نواز شریف کے بیٹوں حسین نواز ، حسن نواز اور سابق وزیرخزانہ اسحاق ڈار کو انٹرپول کے ذریعہ وطن واپس لانے کا فیصلہ کر لیاہے۔ ملزمان کی واپسی نگران وزیر داخلہ کے لیے ایک امتحان ہے۔ تینوں ملزمان کو وطن واپس لانے کے لیے انٹرپول سے رابطہ کیا جائے گا جس کے لیے خط تیار کرلیا گیا ہے۔ آئندہ چوبیس گھنٹوں میں وزارت داخلہ کو خط لکھ کر انٹرپول سے گرفتاری کی درخواست کی جائے گی۔

یہ بھی پڑھیں: نیب نے چودھری نثار کے مدمقابل لیگی امیدوار کو گرفتار کر لیا 

دوسری جانب نیب نے وزیراعظم کے سابق سکرٹری فواد حسن فواد ،سیکرٹری پنجاب نجم شاہ اور سیکرٹری ہیلتھ پنجاب علی جان کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش کردی ہے۔ نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ وزارت داخلہ کو ملزمان کے خلاف دائر ریفرنس، احتساب عدالت کے وارنٹ گرفتاری سے بھی آگاہ کیا جائے گا۔

ملزمان کے خلاف ریڈ وارنٹ اور انٹرپول کے ذریعہ گرفتاری سے متعلق نیب کے پاس ٹھوس جواز اور شواہد موجود ہیں۔ نیب کی جانب سے تینوں ملزمان کے نام ای سی ایل میں شامل کرنے کے لیے پہلے ہی وزارت داخلہ کو دو مرتبہ خطوط لکھے جا چکے ہیں۔

یہ ویڈیو بھی دیکھیں: