مہمان گھروں کو لوٹ گئے


کراچی( 24نیوز ) پاکستان سپرلیگ کے کراچی میں کامیاب فائنل،اسلام آباد یونائیٹڈ کی جیت پر ایک شاداں ہے،سندھ حکومت ، پی سی بی اور سکیورٹی فورسز کی کارکردگی کو دل کھول کرسراہا جارہا ہے،  سپرلیگ فائنل تھری میں اسلام آباد یونائٹڈ دوسری مرتبہ چیمپئن بنی ہے۔
وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے ملک میں پی ایس ایل کے کامیاب انعقاد پر قوم کو مبارکباد دی ہے،انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ پی ایس ایل میچز میں بھرپور شرکت پر قوم مبارکباد کی مستحق ہے، پی ایس ایل نے پوری قوم کوایک نیا جذبہ اورخوشی دی ہے، پی ایس ایل کے انعقاد میں صوبائی حکومت کاتعاون شامل ہے جب کہ اس میں مسلح افواج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کا اہم کردارہے، کراچی کے امن اور خوشیوں کی بحالی میں نوازشریف کا ویڑن شامل ہے، نوازشریف کے وعدے اورویڑن کے تحت حکومت قوم کوخوشیاں واپس لوٹا رہی ہے، ملکی معیشت کی بحالی اور امن کا قیام حکومتی کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

پی ایس ایل فائنل: اسلام آباد یونائیٹڈ نے پشاور زلمی کو 3 وکٹوں سے شکست دے دی
چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ ہمارے قومی جذبے کو شکست نہیں دی جا سکتی،آج پاکستان جیت گیا ہے۔ پاکستان سپر لیگ کے فائنل میچ کا فیصلہ آنے کے بعد آرمی چیف نے پیغام دیتے ہوئے اسلام آباد یونائیٹڈ کو جیت پر مبارکباد پیش کی۔انہوں نے مزید کہا کہ کراچی کے شائقین کرکٹ کا نظم و ضبط مثالی ہے۔


اسی طرح سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز نے ٹوئٹر پر اپنی ٹوئٹ میں کہا کہ کراچی میں جہاں ہڑتال ہوتی تھی اب انٹرنیشنل کرکٹ لوٹ آئی ہے،اس موقع پر جہاں مریم نواز نے اپنے والد نوازشریف کا شکریہ ادا کیا وہیں آصف زرداری کے دور حکومت پر بھی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ آصف زرداری کی حکومت بھی یہ کام نہ کرسکی۔
چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی بھی پیچھے نہیں رہے انہوں نے بھی کہا ہے کہ پی ایس ایل فائنل کا پاکستان میں انعقاد بھارت کے منہ پر طمانچہ ہے،چیئرمین سینیٹ پی ایس ایل کا فائنل دیکھنے کے لیے نیشنل پریس کلب آئے اور انہوں نے میچ کے ابتدائی اوورز بھی دیکھے،انہوں نے کہا کہ چیئرمین سینٹ میر صادق سنجرانی کا کہنا تھا کہ دنیا دیکھ لے کہ پاکستان کتنا پر امن ملک ہے۔ جو پاکستان کو دہشتگرد کہتے تھے دیکھ لیں پاکستانی کتنے عظیم لوگ ہیں، وفاق پاکستان کی علامت کی حیثیت سے میری ہمدردیاں پاکستان کیساتھ ہیں، جو ٹیم بھی جیتے گی پاکستان ہی جیتے گا اور پوری قوم مل کر پاکستان زندہ باد کے نعرے لگائے، اسٹیڈیم میں کسی سیاسی جماعت کے پرچم لے جانے پر پابندی اچھا اقدام ہے، اسٹیڈیم میں صرف پاکستان کا پرچم اور پاکستان زندہ باد کا نعرہ گونج رہا ہے۔
جبکہ چیئرمین پی سی بی نجم سیٹھی نے قوم کو خوشخبری سناتے ہوئے کہا ہے کہ اگلے پی ایس ایل کے میچز کراچی اور لاہور سمیت پاکستان کے 4 شہروں میں ہوں گے، پاکستان میں کرکٹ کے دروازے کھل گئے ہیں اور ویسٹ انڈیز کی ٹیم بھی پاکستان آ رہی ہے،سارا کریڈیٹ عوام کو دیتا ہوں، اگر عوام نہ چاہتے تو یہ کبھی ممکن نہ ہوتا، سندھ حکومت نے ہمارے ساتھ بہت تعاون کیا۔
مجموعی طور پر پی ایس ایل کو دیکھا جائے تو پاکستانی کھلاڑی تمام شعبوں میں غیر ملکیوں پر چھائے رہے،ٹورنامنٹ کے اختتام پر سب سے زیادہ رنز اسلام آباد یونائیٹڈ کے لیوک رونکی نے بنائے، انہوں نے 435 رنز اسکور کیے جبکہ کامران اکمل محض 10 رنز کے فرق سے حنیف محمد کیپ سے محروم ہوگئے،ٹورنامنٹ کی واحد سنچری بھی پشاور زلمی کے کامران اکمل کے نام رہی، انہوں ںے کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے خلاف 107 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیلی تھی،ٹورنامنٹ میں سب سے زیادہ چھکے مارنے کا اعزاز بھی کامران اکمل کے نام رہا جنہوں نے 28 چھکے لگائے،البتہ کامران اکمل کے نام ایک منفی ریکارڈ بھی ا?یا اور وہ یہ کہ کامران اکمل پی ایس ایل تھری میں سب سے زیادہ 3 بار ڈک یعنی صفر پر آﺅٹ ہوئے،بیٹنگ کے شعبے میں دیگر نمایاں پاکستانی بیٹسمینوں میں کراچی کنگز کے بابر اعظم رہے جنہوں نے 12 میچز میں پانچ نصف سنچریوں کی مدد سے 402 رنز اسکور کیے۔
اسی طرح بولنگ کے شعبے میں پاکستانی کھلاڑیوں نے غیر ملکی بولر کو مکمل طور پر آوٹ کلاس کردیا اور ٹاپ تھری میں تین پاکستانی فاسٹ بولرز نے جگہ بنائی،اسلام آباد یونائیٹڈ کے فاسٹ بولر فہیم اشرف 12 میچز میں 18 کھلاڑیوں کو آوٹ کرکے ٹورنامنٹ کے بہترین بولر قرار پائے،دوسرے نمبر پر پشاور زلمی کے وہاب ریاض رہے اور انہوں نے بھی 18 شکار کیے تاہم بہترین اوسط پر فہیم اشرف کو ٹاپ پوزیشن ملی،تیسرے نمبر کراچی کنگز کے فاسٹ بولر عثمان خان شنواری رہے جنہوں نے 16 کھلاڑیوں کو آو¿ٹ کیا،کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے راحت علی 11 میچز میں 15 شکار کے ساتھ چوتھے بہترین بولر قرار پائے،ٹورنامنٹ میں بہترین بولنگ فیگر ملتان سلطانز کے فاسٹ بولر عمر گل نے حاصل کی، انہوں نے کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے خلاف میچ میں 4 اوورز میں 24 رنز دے کر 6 کھلاڑیوں کو ٹھکانے لگایا۔
اس کے بعد بہترین بولنگ کا مظاہرہ لاہور قلندرز کے نوجوان فاسٹ بولر شاہین شاہ آفریدی نے کیا جنہوں نے ملتان سلطانز کے خلاف میچ میں 3.4 اوورز میں صرف 4 رنز دے کر 5 کھلاڑیوں کو آو¿ٹ کیا۔
پی ایس ایل میں غیر ملکیوں نے پاکستانیوں کے دل جیتے ، پاکستان آئے غیرملکی کھلاڑی، فرنچائز عملے کے ارکان اور دیگر حکام اپنے اپنے ملک روانہ ہوگئے،فائنل میں اسلام آباد یونائیٹڈ کی قیادت کرنے والے جنوبی افریقی بلے باز جے پی ڈومنی اپنے ملک روانہ ہوگئے جن کا کہنا ہے کہ پاکستانی مداحوں کی جانب سے سپورٹ کیے جانے پر ان کا شکریہ ادا کرتا ہوں، بہت سے غیرملکی کرکٹرز پاکستان میں دوبارہ آکر کھیلنا چاہتے ہیں۔
ویسٹ انڈیز سے تعلق رکھنے والے آندرے فلیچر نے جاتے ہوئے کہا کہ پاکستان بہت خوبصورت ہے، آئی لو پاکستان ، یہاں کھیل کر بہت مزہ آٓیا اور پاکستانی شائقین سے دوبارہ ملاقات ہوگی،پشاور زلمی کے کپتان ڈیرن سیمی کا کہنا تھا پورے پاکستان خصوصاً لاہور اور کراچی کے شہریوں کا شکریہ، خواہش ہے آئندہ بھی پاکستان میں کرکٹ کھیلیں،اسلام آباد یونائیٹڈ کے وکٹ کیپر اور نیوزی لینڈ کے لیوک رونکی بھی اپنے ملک روانہ ہوگئے جب کہ دیگر کھلاڑیوں میں بنگلادیش سے تعلق رکھنے والے شبیر الرحمان اور چین کے جیان لی بھی روانہ ہونے والوں میں شامل ہیں۔
آئی سی سی کے سکیورٹی کنسلٹنٹ ریک ڈیکیشن اور اسلام آباد یونائیٹڈ کے کوچ ڈین جونز بھی اپنے ملک واپس روانہ ہوگئے۔