پنجاب بھر میں دوسرے روز بھی میڈیکل سٹورز بند،مریض رل گئے

پنجاب بھر میں دوسرے روز بھی میڈیکل سٹورز بند،مریض رل گئے


لاہور( 24نیوز ) پنجاب بھر میں ڈرگ ایسوسی ایشن کی ہڑتال دوسرے روز میں داخل ہوگئی، شہر کے بیشتر میڈیکل سٹورز جزوی طور پر بند ہونے سے مریض جان بچانے والی ادویات کے حصول کے لئے رل گئے۔

حکومت ڈرگ ایسوسی ایشن کے سامنے بے بس دکھائی دینے لگی۔ مذاکرات کامیاب ہونے کے بعد ڈرگ ایسوسی ایشن کی ہڑتال ختم نہ ہوسکی۔ چند بڑے ناموں کے علاوہ شہر بھر کے میڈیکل سٹورز جزوی طور پر بند ہیں جس کی وجہ سے مریضوں کو ادویات کے حصول میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے،گزشتہ روز بھی ہڑتال کی گئی تھی، ڈرگ ایسوسی ایشن ڈرگ ایکٹ 1976 کے نفاذ کا مطالبہ کررہی ہے،ایکٹ میں ترمیم کو کالعدم قرار دلوانا چاہتی ہے۔

گزشتہ روز پنجاب بھر میں ڈرگ ایکٹ 2017 کے خلاف کیمسٹوں نے لاہور سمیت پورے صوبے میں فارما انڈسٹری فارمیسیوں اور میڈیکل سٹوروں کو تالے لگا دیئے جس سے مریض ادویات کی تلاش میں مارے مارے پھرتے رہے۔ پنجاب کیمسٹ کونسل اور آل پاکستان کیمسٹ ایسوسی ایشن نے پنجاب بھر میں ڈرگ ایکٹ 2017 کے خلاف شٹر ڈان ہڑتال کی مگر بعض شہروں میں میڈیکل سٹور مالکان ڈرگ ایکٹ 2017 کیخلاف ہڑتال کی کال پر میڈیکل سٹورز والے دو دھڑوں میں تقسیم ہو گئے، ایک دھڑے نے ہڑتال سے لاتعلقی کا اعلان توکر دیا ۔

پنجاب کے دیگر شہروں شیخوپورہ، قصور، بھکر، ناروال، ملتان، بہاولپور، گوجرانوالہ، فیصل آباد، خوشاب، راجہ پور، اوکاڑہ، ساہیوال سمیت دیگر شہروں میں آج بھی میڈیکل سٹور بند پڑے ہیں۔