بینظیر بھٹو کی برسی، بلاول اور آصف زرداری کاخراج تحسین

بینظیر بھٹو کی برسی، بلاول اور آصف زرداری کاخراج تحسین


کراچی(24نیوز) بلاول بھٹو اورسابق صدر آصف علی زرداری  نے شہید محترمہ بینظیر بھٹو کی برسی پر ان کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا،انہوں نے اپنے پیغام میں کہا کہ بی بی شہید کے فلسفہ پر ثابت قدم رہیں گے۔

تفصیلات کےمطابق پی پی پی چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا شہید محترمہ بینظیر بھٹو کی برسی کے موقعہ پر پیغام میں کہنا تھا کہ شہید محترمہ بینظیر بھٹو تاریخ ساز مدبر و بھادر رہنما تھیں،وہ پنجاب، سندھ، خیبرپختونخواہ، بلوچستان، کشمیر اور گلگت بلتستان تھیں، ان کا قتل درحقیقت خوشحال، ترقی پسند اور جمہوری پاکستان کے خواب پر شب خون تھا، شہید محترمہ بینظیر بھٹو سیاست میں قدم رکھنے کے بعد ایک پل بھی چین سے نہیں بیٹھیں، بطور سیاسی رہنما انہوں نے ہمیشہ ملک میں اتحاد و ہم آہنگی کو فروغ دیا۔

بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ وہ عوامی حقوق و مفادت کی حفاظت کے لیے جدوجہد کرتی رہیں،وہ ملک سمیت دنیا بھر میں ترقی پسندی و روشن خیالی کو تقویت دینے کے لیے سرگرم رہیں، ان کا کہنا تھا کہ بطور وزیراعظم انہوں نے ملک کو حقیقی فلاحی ریاست بنانے کے لیےاقدامات اٹھائے،وزیراعظم بینظیر بھٹو نے عوام دوست پالیسیاں متعارف اور عوامی خدمت پر مبنی اقدامات اٹھائے۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ انہوں نے عالمی سطح پر پاکستان کا درست و مثبت امیج اجاگر کیا، وہ ملکی دفاع کو ناقابلِ تسخیر بنانے کے معاملے پر کبھی ایک پل کے لیئے بھی مصلحت کا شکار نہیں ہوئیں، انہوں نے ایٹمی پروگرام جاری رکھا، ملک کو میزائیل ٹیکنالوجی کا تحفہ دیا، شہید بھٹو کا نظریہ اور شہید بی بی کا فلسفہ روشن پاکستان کی جانب واحد راستہ ہے۔

پیپلز پارٹی اپنی شہید قیادت کے فکر و فلسفے پر سختی سے کاربند ہے، آسمان گرے یا زمین پھٹے، ہم اپنی جدوجہد سے ایک انچ بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے، بلاول بھٹو زرداری کا مزید کہنا تھا کہ شہید بی بی کی برسی مساوات پر مبنی جمہوری پاکستان کے دشمنوں کے لیئے پیغام ہے وہ پیغام یہ ہے کہ پاکستان دشمنوں کی شکست ناگزیر اور شہید بی بی کا مشن ناقابل تسخیر ہے۔

سابق صدر آصف علی زرداری کا محترمہ بینظیر بھٹو کے یوم شہادت پر پیغام میں کہنا تھا کہ صبر اور برداشت کے اصول اور بی بی شہید کے فلسفہ پر ثابت قدم رہیں گے،بااختیار پارلیمنٹ پر کوئی سمجھوتا نہیں ہوگا، آئین ،جمہوریت اور انسانی آزادی کے نظریے پرقائم ہیں، شدت پسندی اوردہشت کی مزاحمت کرتے رہیں گے ،پیپلز پارٹی کمزور طبقات کے حقوق کا تحفظ کرتی رہے گی ۔