سال 2018 میں خسرہ نے کتنی ماؤں کی گودیں اجاڑ یں؟

سال 2018 میں خسرہ نے کتنی ماؤں کی گودیں اجاڑ یں؟


لاہور(24نیوز) جھنگ میں رواں سال خسرہ بچوں پر بھاری رہا،  دس سے زائد بچے جاں بحق ،273 متاثر ہوئے، محکمہ صحت کےخسرہ پرکنٹرول کے دعوے بےسود نکلے،متاثرہ بچوں کی رپورٹ24نیوزنے حاصل کرلی۔

 تفصیلات کے مطابق صوبہ پنجاب کے علاقہ جھنگ میں 2018 کے دوران خسرے کاخوف بچوں پر طاری رہا،  رپورٹ کے مطابق رواں سال کے دوران 273 بچوں میں بیماری کی تشخیص ہوئی،دس سے زائد بچے جاں بحق ہوئے، ورثاء نے محکمہ صحت کی کارکردگی کو ناقص قرار دیا،ٹوئنٹی فورنیوز کے ملنے والی رپورٹ کےمطابق ضلع بھر میں کمسن بچےخسرہ سے زیادہ متاثر ہوئے۔

دیہات میں محکمہ صحت کی ٹیمیں ویکسین لے کر وقت پر نہ پہنچ سکیں، جس کےباعث بچوں کے علاج میں دشواری کا سامنا کرنا پڑا، شہریوں کا کہنا تھا کہ محکمہ صحت کے خسرہ پرکنٹرول کے دعوے بےسود نکلے۔

اعلیٰ حکام صورتحال پرنوٹس لیکر بڑے پیمانے پرخسرہ بچاومہم کا آغاز کریں تاکہ مزید زندگیاں تباہ ہونے سے بچ سکیں۔