سندھ میں تعلیمی اداروں کی خراب صورتحال،اساتذہ،بچے پریشان

سندھ میں تعلیمی اداروں کی خراب صورتحال،اساتذہ،بچے پریشان


کراچی( 24نیوز ) صوبہ سندھ میں تعلیم کو فروغ دینے کے کھوکھلے دعوے ، تعلیمی اداروں میں اساتذہ طلباء تو موجود ہیں مگر سہولتیں ناپید۔

 سجاول شہر کے مرکز میں موجود گورنمنٹ پرائمری سکول بہاول خان مگسی ہے یہ سکول تعلیمی معیار کے حساب سےسجاول ضلع کے صف اول کے سکولوں میں شامل ہے مگر اس وقت سہولتیں ناپید اور بیشمار مسائل کے باعث الجھنوں میں پھنسا ہوا ہے جس کا اثر بچوں کی تعلیم پر ہو رہا ہے۔

سکول کی عمارت خستہ حال ہونے سے خطرناک بن گئی،سکول ہیڈماسٹر نے بچوں کی زندگیاں بچانے کیلئے اپنی مدد آپ چہوپڑیاں بناکرتعلیم دینے میں مصروف ہے تو کچھ معصوم بچے کھلے آسمان تلے اپنی تعلیمی سرگرمیاں جاری رکھنے پر مجبور ہیں۔

 خون جما دینے والی سردی میں بچے باہر بیٹھ کر تعلیم حاصل کرنے پر مجبور ہیں،نونہال بیمار بھی ہوگئے ہیں ،سکولی اساتذہ کا کہنا اہے ہم نے بار بار ضلع انتظامیہ منتخب نمائندوں اور محکمہ تعلیم کے اعلی افسران کو ساری صورتحال سے آگاہ بھی کیا ہے مگر تاحال ہماری کوئی شنوائی نہیں ہو سکی۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer