خیبر پختونخوا کے میڈیکل کالجز سے نکالے گئے فاٹا کے طلبہ سراپا احتجاج


  پشاور(24نیوز): خیبر پختونخوا کے میڈیکل کالجز سے نکالے گئے فاٹا کے طلبہ سراپا احتجاج بن گئے، فاٹا سیکرٹریٹ کے سامنے مظاہرہ کرتے ہوئے طلبہ کا کہنا تھا کہ اس کی ذمہ دار وزارت سیفران ہے۔

میڈیکل کالجز سے نکالے گئے قبائلی طلبہ نے پشاور میں ورسک روڈ پر فاٹا سیکرٹریٹ کے سامنے مظاہرہ کیا' مظاہرین کا کہنا تھا کہ وزارت سیفران نے انکے داخلہ لیٹر جاری کرنے میں تاخیر سے کام لیا جس کے باعث انہیں کالجز سے نکال دیا گیا۔

طلبہ کا کہنا تھا کہ فاٹا سیکرٹریٹ نے وزارت سیفران کو طلباء کو داخلہ لیٹرز بھیجے جو وزارت سیفران نے اپنے پاس دبا لئے، انکا کہنا تھا کہ بروقت لیٹرز جاری نہ کر کے انکا قیمتی وقت برباد کیا جا رہا ہے​۔ طلبہ کےمطابق ایک طرف فاٹا میں تعلیم حاصل کرنےکےمواقع میسر نہیں تو دوسری طرف بندوبستی علاقوں میں بھی پڑھنے والے قبائلی طلبہ کو تعلیم چھوڑ نے پرمجبور کی ​اجا رہا ہے۔