حیدرآباد: خواتین پر تشدد کے واقعات بڑھنے لگے

حیدرآباد: خواتین پر تشدد کے واقعات بڑھنے لگے


حیدرآباد (24 نیوز) خواتین پر تشدد کے واقعات میں اضافہ ہونے لگا، سوشل میڈیا اور فون کالز پر خواتین کو ہراساں کرنے کے کیسز سامنے آنے لگے، رپورٹ کے مطابق خواتین پر تشدد کے 617 واقعات سامنے آئے ہیں۔
تفصیلات کے مطابق  فروری 2017 میں وویمن پروٹیکشن سیل کا قیام عمل میں آیا تو خواتین کو شکایات درج کرانے کا پلیٹ فارم ملا،  جس کے باعث خواتین کو ہراساں کرنے اور ان پر تشدد کرنے والوں کے خلاف کارروائیاں تیز ہوگئیں، ڈبلیو پی سی کی رپورٹ کے مطابق ڈیڑھ سال کے دوران حیدر آباد میں خواتین پر تشدد کے 617 واقعات سامنے آئے،گھریلو تشدد کے علاوہ سوشل میڈیا اور فون کالز پر ہراساں کرنے کے کیسز بھی رپورٹ ہوئے۔
دوسری جانب فوکل پرسن ڈبلیو پی سی سرتاج عباسی کے مطابق نوے فیصد کیسز کو حل کیا جا چکا ہے، جبکہ سوشل میڈیا پر خواتین کو ہراساں کرنے والوں کو  بھی پکڑا گیا ہے، ان کا مزید کہنا تھا کہ خواتین میں شعور کی کمی ایسے واقعات کی وجہ ہیں۔