2017 میں پاکستان کے انمول نگینے ہم سے جدا

2017 میں پاکستان کے انمول نگینے ہم سے جدا


لاہور (24نیوز) زمانہ بڑے شوق سے سن رہا تھا ،ہم ہی سو گئے داستاں کہتے کہتے ، سال دو ہزار سترا کے دوران کئی انمول نگینے ہم سے جدا ہوکر آسودہ خاک ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق استاد فتح علی خان،جسٹس سعید زماں صدیقی،معروف سنگرعامر زکی،پاکستانی مدر ٹریسا ڈاکٹر روتھ فاو،اداکار افتخار قیصر،بل بتوڑی کے کردارسے شہرت پانے والی اداکارہ نصرت آرائی،کامیڈی اداکار خواجہ اکمل، ہمدرد نونہال کے مدیر مسعود احمد ،کتنے ہی اہم نگینے ہیں جو2017میں ہم سے جدا ہوگئے۔

یہ بھی پڑھئے: 2017پاکستان فلمی صنعت کیلئے خوش قسمت ترین سال رہا

کلاسیکل گھرانے سے تعلق رکھنے والے فن موسیقی کے معروف فنکاراستاد فتح علی خان رواں برس جنوری میں انتقال کرگئے،حکومت پاکستان نے 1969 میں انہیں تمغہ حسن کارکردگی سے نوازا۔

نامور گٹارسٹ عامر ذکی بھی ان فنکاروں میں شامل ہیں، جو رواں برس 2 جون کو ہم سے بچھڑ گئے،انہوں نے 1995 میں 'سگنیچر' کے نام سے اپنی البم ریلیز کی ’میرا پیار‘۔

ڈاکٹر رتھ فاؤ وہ پہلی خاتون ڈاکٹر ہیں جنہوں نے جزام کے مرض میں مبتلا افراد کی ایسے دل جوئی کی کہ اپنے آبائی وطن جرمنی کو چھوڑ کر یہیں کی ہوگئی پاکستانی مدر ٹریسا کا خطاب حا صل کرنے والی ڈاکٹر رتھ فاؤ 87 سال کی عمر میں 10 اگست کو چل بسیں۔

بچوں کے مشہور پاکستانی ڈرامے 'عینک والا جن' میں 'بل بتوڑی' کا کردار نبھانے والی نصرت آرائی بھی رواں برس 65 سال کی عمر میں فالج کے مرض کے باعث دنیائے فانی سے رخصت ہوگئیں۔

ہمارے کتنے ہی پیارے تھے جو چلے گئے، کتنی ہی ادبی و اہم شخصیات ہمیں چھوڑ کر چلی گئیں، یہ لوگ جو چلے گئے ہمارے ملک کا وہ قیمتی سرمایہ تھے جنہیں کبھی نہیں بھلایا جاسکتا۔