آرمی چیف کی ثالثی پر پنجاب حکومت میں تضاد سامنے آگیا

آرمی چیف کی ثالثی پر پنجاب حکومت میں تضاد سامنے آگیا

لاہور (24نیوز) آرمی ثالث بنے اور دھرنا ختم ہوا، جو رانا ثناء اللہ کو ہضم نہ ہو سکا،ان کا کہنا تھا کہ معاہدے میں آرمی چیف کی تعریف کا پیرا ڈالنا غلط ہے۔


ذرائع کے مطابق  وزیرِقانون پنجاب راناثنااللہ کا کہنا تھا کہ یہ تاثردرست نہیں کہ زاہد حامد کے استعفیٰ لینے میں آرمی چیف کا کردار ہے، استعفیٰ لینے کافیصلہ منتخب وزیراعظم نے کیا،جس میں مرکزی کردارشہبازشریف کا ہے،معاہدے میں آرمی چیف کا شکریہ ادا کرنے کا ذکر نہیں ہونا چاہیے تھا،ان کا شکریہ توسب ادا کرتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ معاہدے میں آرمی چیف کی تعریف کا پیرا ڈالناغلط تھا,وزیراعظم کو آرمی چیف نے طاقت کے استعمال کانہیں کہا تھا۔