ن لیگ معیشت کو بارودی سرنگوں،ٹائم بموں پر چھوڑگئی:حکومت

ن لیگ معیشت کو بارودی سرنگوں،ٹائم بموں پر چھوڑگئی:حکومت


اسلام آباد( 24نیوز ) قومی اسمبلی اجلاس نئے پاکستان میں پہلی بار کورم ٹوٹ گیا کاروائی کچھ دیر ملتوی کرنا پڑگئی منی بجٹ پر بحث جاری وزیر مملکت توانائی عمر ایوب کہتے ہیں سابقہ حکومت نئی حکومت کو بارودی سرنگوں اور ٹائم بموں پر چھوڑ کر گئی ہے جبکہ اپوزیشن کہتی ہے پوری تیاری سے تبدیلی لانے والوں کی تبدیلی کی قلعی کھل گئی ایوان میں تحریک انصاف چھوڑ کر پی پی میں جانے والی نازبلوچ اور تحریک انصاف کی رکن عاصمہ حبیب کے ایک دوسری کو طعنے دیتی رہیں۔
قومی اسمبلی آدھ گھنٹہ تاخیر سے شروع ہواتو توجہ دلاو نوٹس پر وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے ایوان کو بتایا کہ چھ مختلف وجوہات کی بنا پرایک لاکھ دوہزار اکسٹھ میں سے چھ ہزار شناختی کارڈز بلاک ہیں، ملا منصور جیسی شرمندگی سے بچنے کے لئے یہ اقدامات اٹھائے گئے تصدیقی عمل کے بعد کارڈز ان بلاک کئے جارہے ہیں شیخ فیاض کی نشاندہی پر کورم پورا نہ نکلا اور اجلاس کچھ دیر کے لئے ملتوی کرنا پڑا ۔
کورم دوبارہ پورا ہونے پر اجلاس شروع ہوا تو وزیر مملکت توانائی عمر ایوب خان نے بجٹ پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سابقہ حکومت ہمیں بارودی سرنگوں اور ٹائم بموں پر ہمیں چھوڑ کر گئی دوہزار اٹھارہ تک قرضہ انتیس ہزار ارب تک پہنچ چکا گیس کی قیمتوں میں اضافہ گڑوا گھونٹ پینا پڑا سرکلر ڈیٹ 640ارب تک پہنچ چکا ،پچھلی حکومت نیپرا کو نظرانداز کرتی رہی انتیس فیصد بل چوری یا لائن لاسز میں چلا جاتا ہے ۔
حکومت نے الیکشن کو مدنظر رکھ کر فیصلے کئے حکومت کے غلط فیصلے نے 225ارب روپے کا ٹیکہ لگوا دیا لوڈشیڈنگ پیداوار ہی نہیں ترسیل کی وجہ سے بھی ہے بجٹ بحث کے دوران پی پی کی نازبلوچ کی تنقید پر تحریک انصاف عاصمہ حبیب نے کہا کہ ناز بلوچ کو جوعزت عمران خان نے دی مجھے دی ہوتی میں مر بھی جاتی پی ٹی آئی نہ چھوڑتی پچھلے حکمرانوں نے ملکی دولت کو ڈاکوﺅں کی طرح لوٹا ۔
اجلاس سے خطاب میں رانا تنویر نے کہا کہ سرکلر ڈیٹ قرضہ نہیں ہوتا حکومت اتنا تو سمجھ لے اجلاس کا دوسری بار کورم پوائنٹ آﺅٹ ہوا مگر کورم پورا نکلا اجلاس پیر کی سہہ پہر چار بجے تک ملتوی کردیا گیا۔