عامرلیاقت اور پی ٹی آئی قیادت میں اختلافات شدت اختیار کرگئے

عامرلیاقت اور پی ٹی آئی قیادت میں اختلافات شدت اختیار کرگئے


کراچی(24نیوز) پاکستان تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی عامر لیاقت اور پارٹی میں اختلافات شدت اختیار کرگئے۔انھوں نے پی ٹی آئی کا آفیشل واٹس ایپ گروپ چھوڑدیا جبکہ سوشل میڈیاپرکپتان اورپارٹی دونوں کوتنقیدکانشانہ بنایا۔

گورنر ہاؤس میں اجلاس میں نہ بلانے پرعامر لیاقت کا غصہ شدت اختیار کرگیا۔ پی ٹی آئی رکن اسمبلی نےسندھ ارکان کاپارٹی آفیشل واٹس ایپ گروپ بھی چھوڑدیا۔آڈیو پیغام میں عامر لیاقت پی ٹی آئی رہنماؤں پر پھٹ پڑے، ہربار شور کیوں مچانا پڑتا ہے۔انھوں نے آڈیو پیغام میں انتخابی جیت پرتنبیہ بھی کردی۔
یہی نہیں پی ٹی آئی رہنماکپتان کوبھی ہدف تنقید بناچکےہیں۔

عامر لیاقت نے گزشتہ روز کہاتھاکہ کراچی میں عمران خان کی وجہ سے پی ٹی آئی نہیں جیتی۔انھوں نے عمران خان کے وزیراعظم بننے کےبعداب تک کراچی نہ آنےپرتنقید بھی کی تھی۔ان کاکہناتھاگیارہ دن ہوگئے قائداعظم انتظار کررہے ہیں کہ ان کا بیٹا ان سے ملنے کب آئے گا۔کراچی اور فیصل آباد والوں کا شکریہ ادا کرو۔کراچی اور فیصل آباد نہ ہوتے توعمران خان وزیراعظم نہ ہوتا۔
پی ٹی آئی رکن اسمبلی نے ٹویٹرپربھی پارٹی کے خلاف محاذگرم کررکھاہے۔ہیلی کاپٹرایشو کولےکرپارٹی مؤقف کےخوب لتے لیے۔ان کا کہنا ہے کہ ہیلی کاپٹر کی اڑان ہے پچپن روپے فی کلومیٹر یہ ہے نئے پاکستان کی شان۔ان کامزیدکہناتھایہ سب غیبی امداد کا نتیجہ ہے، حاسدین کی سمجھ میں نہیں آنے والا، پھر کہا دشمنو عقل سے مت سوچو یہ ہیلی کاپٹر عشق کے ایندھن سے اڑتا ہے۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔