وزارت خزانہ جاری کھاتوں کے خسارے کو قابو کرنے میں ناکام


اسلام آباد(24نیوز) وزارت خزانہ جاری کھاتوں کے خسارے کو قابو کرنے میں ناکام ، جاری کھاتوں کا خسارہ مسلسل بڑھنے لگا،،حکام وزارت خزانہ کے مطابق مالی سال کے پہلے چھ ماہ میں جاری کھاتوں کا خسارہ 7 ارب 40 کروڑ ڈالرز تک پہنچ گیا،، جاری کھاتوں میں اضافے سے حکومت کو بیرونی ادائیگیوں میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔
تفصیلات کے مطابق وزارت خزانہ جاری کھاتوں کے خسارے کو قابو کرنے میں ناکام ہے، جاری کھاتوں کا خسارہ مسلسل بڑھنے لگا،، مالی سال کے پہلے چھ ماہ میں جاری کھاتوں کا خسارہ 7 ارب 40 کروڑ ڈالرز تک پہنچ گیا،، حکومت کو بیرونی ادائیگیوں میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔
جاری کھاتوں کے خسارے کو روکنا حکومت کے لیے نا ممکن ہوچکا ہے. ملکی برآمدات اور ترسیلات زر کے ساتھ ساتھ براہ راست سرمایہ کاری میں کمی کے باعث جاری کھاتوں کا خسارہ بھی بڑھتا جا رہا ہے۔
وزارت خزانہ کے مطابق مالی سال کے پہلے چھ ماہ میں جاری کھاتوں کا خسارہ 7 ارب 40 کروڑ ڈالرز تک پہنچ گیا،،گزشتہ برس اسی عرصے میں جاری کھاتوں کا خسارہ 4 ارب 70 کروڑ ڈالرز تھا. جاری کھاتوں کے خسارے میں 90 فیصد سے زیادہ اضافہ ہو۔
وزارت خزانہ کا کہنا ہے کہ رواں سال جاری کھاتوں کا خساری 14 ارب ڈالرز تک رہنے کا امکان ہے، گذشتہ برس جاری کھاتوں کا خسارہ 12 ارب ڈالرز رہا ہے،، جاری کھاتوں میں اضافے سے حکومت کو بیرونی ادائیگیوں میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔