مولانا فضل الرحمان آگئے تو پی ٹی آئی کا کیا حال ہوگا؟بلاول بھٹو نے توبہ توبہ کردی

مولانا فضل الرحمان آگئے تو پی ٹی آئی کا کیا حال ہوگا؟بلاول بھٹو نے توبہ توبہ کردی


اسلام آباد(24نیوز)چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ آج بھی پاکستان وہی ہے جہاں سیاسی جماعتوں کی گرفتاریاں کی جاتی ہیں ۔

احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے ٹیکسز کی صورت میں عوام مہنگائی کا بوجھ اٹھا رہے ہیں  کٹھ پتلی حکومت کی ہمارے سامنے کوئی حیثیت نہیں، آصف علی زرداری بہادر سیاست دان ہیں ،  18 ویں ترمیم پر سمجھوتہ نہیں کریں گے ۔

انہوں نے کہا کہ عوام سلیکٹڈ حکومت کو نہیں مانتے ، اپوزیشن کو جھوٹے کیسز بنا کر گرفتار کیا جاتا ہے ، بینظیر بھٹو شہید اور آصف زرداری دور میں ایک بھی سیاسی قیدی نہیں تھا ۔

انہوں نے کہا کہ  سیاسی مخالفوں کے خلاف آج انتقامی کاروائیاں کی جارہی، جمہوری طریقہ سے آکر ہمارا مقابلہ کریں، پاکستان پیپلز پارٹی نے ہمیشہ آمرانہ حکومتوں کا مقابلہ کیا ہے، پی ٹی آئی ہمارے لئیے کوئی اہمیت نہیں رکھتے۔ فریال تالپور اور آصف علی زرداری ڈٹ کر انتقامی کاروائیوں کا مقابلہ کر رہے ہیں۔آصف علی زرادری نیب راولپنڈی میں اپنا اے سی نہیں چلا رہے جب ہم ملاقات کیلئے نیب  عدالت گئے تب بھی زرادری صاحب نے اپنا ای سی بند رکھا ہوا تھا۔

پاکستان پیپلز پارٹی سمیت دیگر اپنا اپنا احتجاج کر رہی ہے ہم نے ملکر بھی 25 جولائی کو ملک بھر میں احتجاجی جلسے  کیے پاکستان کی عوام نے سلیکٹڈحکومت کو مسترد کردیا ہے، آزادی صحافت پر آج کے حکمران حملہ کر رہے ہیں، کراچی میں صرف ایک رکن اسمبلی کو نہیں پیپلز پارٹی کے کارکنان کو بھی گرفتار کیا گیا ہے، اگر پیپلز پارٹی کی حکومت آتی ہے تو ہم پی ٹی آئی سے انتقام نہیں لیں گے، ن لیگ کی حکومت آئی تو پی ٹی آئی کا کیا حال ہوگا اور سوچے اگر مولانا فضل الرحمن کی حکومت آئی تو توبہ توبہ پی ٹی آئی کا کیا حال ہوگا ۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer