پانچ سال سے منتخب عوامی نمائندوں کو ’’عوام‘‘ یاد آنے لگے

پانچ سال سے منتخب عوامی نمائندوں کو ’’عوام‘‘ یاد آنے لگے


کراچی(24نیوز)عوامی نمائندوں کامنتخب ہوکراپنے حلقے کے عوام کوبھول جاناکوئی نئی بات نہیں،حیدرآباد کے حلقہ این اے 226میں خالد مقبول صدیقی ووٹ مانگنے توگئے لیکن پھرکبھی عوام کوشکل نہ دکھائی۔

تفصیلات کے مطابق انتخابی مہم کے دوران عوام کی تقدیر بدلنے کے دعوے تو بہت کیے جاتے ہیں لیکن منتخب ہونے کے بعد یہی نمائندے اپنے حلقے کی عوام کو بھول جاتے ہیں۔2018 کے عام انتخابات بھی آگئے لیکن عوامی نمائندے کیے گئے وعدے آج تک پورے نہ کرسکے۔ ایم کیو ایم کےکنوئیرخالد مقبول صدیقی بھی ان ہی عوامی نمائندوں میں شامل ہیں جنہوں نے وعدے تو کیے لیکن وفا نہ کیے۔

یہ بھی پڑھیں:ووٹ کی اہمیت اجاگر کرنے کیلئے24 نیوز میدان میں آگیا 

 حلقہ این اے 226 کے علاقہ سائٹ ایریا اورلطیف آباد عدم توجہی کے باعث تباہ ہوکر رہ گئے۔عوام پانچ سال تک خالد مقبول صدیقی کی شکل دیکھنے کو ترستے رہے۔ حلقے میں موجود پارکس،کھیلوں کے میدانوں،فلٹریشن پلانٹس اورسڑکیں بھی عدم توجہی کے باعث تباہی کے دہانے پر پہنچ گئیں۔خالد مقبول صدیقی نے حلقے میں نئے کام کروانا تودور پہلے سے موجود منصوبوں کو بھی تباہ کرکے رکھ دیا۔ایم کیوایم کنوئیر کے رویت سے حلقے کے عوام مایوس دکھائی دیتے ہیں۔

یہ بھی لازمی دیکھیں