بلاول بھٹو  کی نیب پیشی،ڈی چوک میدان جنگ بن گیا



اسلام آباد( 24نیوز )چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو  نیب ہیڈکوارٹر سے واپس روانہ ہوگئے، نیب سے سوالنامہ بلاول بھٹو کو دے دیا، جیالوں کے اسلام آباد میں داخلے پر پابندی لگائی ہوئی تھی۔

تفصیلات کے مطابق نیب نے پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کو جعلی اکاؤنٹس کیس میں آج طلب کر رکھاتھا،اسلام آباد انتظامیہ نے نوٹیفکیشن کرتے ہوئےجیالوں  کےاسلام آباد میں داخلے پر پابندی لگائی،راجہ پرویز اشرف کو بھی آگے جانے سے روک دیا گیا، انتظامیہ کی ہدایات کے باوجو جیالوں نے تمام احکامات کو نظر انداز کردیا ،پیپلزپارٹی کے کارکنوں اور پولیس میں ہاتھاپائی بھی ہوئی،درجنوں افراد کو گرفتار کر لیا، ڈی چوک میدان جنگ بن گیا۔

بلاول بھٹو زرداری کارکنوں کے ہمراہ قافلے کی صورت میں نیب دفتر  پہنچے،بلاول بھٹو کی آج نیب ہیڈ کوارٹرز پیشی کے موقع پر خصوصی سکیورٹی انتظامات تشکیل دیئے گئے ہیں جبکہ سابق صدر آصف علی زرداری نے پیش ہونے سے معذرت کرلی،اسلام آباد پولیس اور ضلعی انتظامیہ کی جانب سے فول پروف سیکورٹی فراہم کی گئی ہے۔

 مجموعی طور پر دو ہزار جوان سیکورٹی کے فرائض سر انجام دے رہے ہیں، پولیس کمانڈوز، سی ٹی ایف اور خواتین اہلکاروں کو بھی تعینات کیا گیا، جبکہ امن و امان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کے لئیے رینجرز کے 200 اہلکار بھی تعینات ہیں، پولیس کی جانب سے جاری ہدایات کے مطابق میڈیا کے افراد بھی اپنی شناخت نمایاں رکھیں۔

کسی بھی غیر متعلقہ شخص کو نیب کورٹ داخلے کی اجازت نہیں، سابق صدر آصف علی زرداری اور بلاول کی جانب سے جعلی اکاؤنٹس کیس میں نیب کے سامنے پیش ہونے کے موقع پر پیپلز پارٹی کی جانب سے کارکنوں کو بھی بلایا گیا ۔