نواز شریف ہمیں اسٹیبلشمنٹ سے لڑوا کر خود ہاتھ ملا لیتے: آصف زرداری


24 نیوز: آصف علی زرداری اور نواز شریف میں دوریاں کیسے پیدا ہوئیں،راز کھلنے لگے،آصف علی زرداری نے سینیر قائدین اور صحافیوں کے سامنے حال دل بیان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق آصف علی زرداری نے سینیر قائدین اور صحافیوں کو سب کچھ بتا ڈالا کہ کس طرح میاں  محمد نواز شریف ہمیں اسٹیبلشمنٹ سے لڑوا کر خود ہاتھ ملا لیتے تھے۔اور ایک بار نہیں بار بار پیچھے ہٹ جاتے رہے ہیں۔

آصف علی زرداری نے مزید بتایا کہ نواز شریف نے جب مشرف پر غداری کا مقدمہ بنایا تو ہم نے ہمیشہ کی طرح ان کا ساتھ دیا۔جبکہ میاں صاحب نے کہا تھا کہ مشرف کو جانے نہیں دیں  گئے لیکن ایسا نہ ہوا میاں صاحب ایک بار پھر اپنی بات سے مکر گئے اور پرویز مشرف کو بھجوا دیا۔مشرف کے مواخذے،اینٹ سے اینٹ کے بیان تک نواز شریف نے ہاتھ کرایا۔بعد میں پتہ چلا کے نواز شریف ڈیل کر چکے تھے۔

علاوہ ازیں نواز شریف نے میرے بیان کا فائدہ اٹھا کر جںرل راحیل شریف کے ساتھ اپنے معاملات سیدھے کرنے کی کوشش کی۔سندھ میں اداروں کے زریعے کارووائیاں بھی نواز شریف کے کہنے پر ہی ہوئیں۔نواز شریف نے میری نیک نیتی کا فاہدہ اٹھایا۔نواز شریف اب بھگتے کسی صورت ہاتھ نہیں ملاوں گا۔

آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ نواز شریف اپنے قریبی افسر کے زریعے مجھے پیغام بھجواتا رہا۔نواز شریف کو جتنا بھولا سمجھتے ہیں وہ اس سے کہیں زیادہ موقع پرست ہے۔ہم سوئلین بالادستی کے تحت نواز شریف ی ہاں میں ہاں ملاتے رہے۔ہم سیاست اور میاں صاحب تجارت کرتے رہے۔نواز شریف نے ہمیں ہر موقع پر بیچا۔سیاست سے ہٹ کر سماجی تعلقات رکھنا چاہ رہا تھا۔