اسلام آباد پولیس نے فیض آباد دھرنے کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرادی

اسلام آباد پولیس نے فیض آباد دھرنے کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرادی


اسلام آباد (24 نیوز): اسلام آباد پولیس نے فیض آباد دھرنے کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرادی، رپورٹ میں پولیس حکام نے ناکامی کا اعتراف کر لیا۔

سپریم کورٹ میں جمع کرائی گئی رپورٹ میں بتایا گیا ہےکہ پولیس اہلکار 20 دن تک دھرنے کے مقام پر تعینات رہنے کی وجہ سے تھک چکے تھے جبکہ راولپنڈی سے تازہ دم مظاہرین دھرنے میں شامل ہوتے رہے۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ مختلف سیکیورٹی اداروں میں کوآرڈی نیشن کا فقدان تھا اور معاملہ حساس ہونے کی وجہ سے زیادہ وقت مذاکرات کرنے میں لگا، جگہ کھلی ہونے کی وجہ سے آنسو گیس مظاہرین پر اثر انداز نہ ہوسکی۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ دھرنا مظاہرین ڈنڈوں، پتھروں اور دیگر آلات سے لیس تھے، مظاہرین نے پریڈ گراؤنڈ منتقلی کا وعدہ بھی پورا نہیں کیا۔ لگ بھگ ساڑھے 5 ہزار اہلکاروں نےآپریشن میں حصہ لیا، جن میں سے 173 پولیس اہلکار زخمی ہوئے۔