اسلام آباد میں امام بارگاہ فائرنگ واقعہ کا ایک اور زخمی چل بسا


اسلام آباد (24 نیوز): اسلام آباد کے سیکٹر آئی ایٹ امام بارگاہ باب العلم پر فائرنگ واقعے کا ایک اور زخمی دم توڑ گیا، شہداء کی تعداد 2 ہوگئی، حساس اداروں کے الرٹ جاری کرنے کے باوجود امام بارگاہ کی حفاظت کے لئے پولیس تعینات نہیں کی گئی۔

گزشتہ روز سیکٹر آئی ایٹ تھری امام بارگاہ باب العلم پر فائرنگ کا ایک اور زخمی چل بسا، سید عین زیدی پمز اسپتال میں زیر علاج تھے، جو زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے، فائرنگ کے تین زخمی اب بھی اسپتال میں زیر علاج ہیں۔

پولیس نے آئی ایٹ امام بارگاہ پر حملے کا مقدمہ تھانہ آئی نائن میں درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے، پولیس نے واقعے کی تحقیقات کے لئے ٹیمیں بھی تشکیل دے دی ہیں۔

پولیس کو شبہ ہے کہ حملے کا ہدف آئی بی کا جاں بحق اہلکار حبدار حسین تھا، پولیس نے 20 عینی شاہدین اور زخمیوں کے بیانات قلمبند کر لئے، سی سی ٹی وی فوٹیجز حاصل کرلی گئی ہیں، گولیوں کے خول فرانزک تجزیئے کے لئے بھجوا دئیے گئے ہیں۔

ذرائع کے مطابق تین روز قبل حساس اداروں کے سیکورٹی الرٹ کے باوجود امام بارگاہ پر ایک بھی اہلکار تعینات نہیں تھا۔