عالمی سیاسی منظرنامے میں خواتین پیش پیش

عالمی سیاسی منظرنامے میں خواتین پیش پیش


لاہور (24 نیوز)عالمی سطح پر سیاست میں خواتین کا اثر و رسوخ بڑھتا جا رہا ہے۔ دنیا کے کم و بیش20 سے زائد ممالک میں خواتین حکمران ہیں اور مختلف حکومتوں میں خواتین انتہائی اہم عہدوں پر تعینات ہیں۔

عالمی سیاسی منظرنامےمیں خواتین کاکردارمسلسل اہمیت اختیارکرتاجاررہاہے۔ دنیاکےکم وبیش20سےزائدممالک کی باگ ڈورخواتین حکمرانوں کےہاتھ میں ہے۔جارجیا کی خاتون سیاستدان سالوم زور ابشویلی نے پہلی خاتون صدر منتخب ہونے کے بعد عہدہ سنبھال لیا، حکمراں جماعت جارجیئن ڈریم پارٹی سے تعلق رکھنے والی فرانسیسی نژاد سابق سفارتکار نے دوسرے مرحلے کے انتخابات میں 59.52 فیصد ووٹ حاصل کیے۔

قبل ازیں عالمی سطح پر سیاست کے میدان میں سرگرم خواتین میں ایک اہم نام انجیلامرکل ہے۔جرمن چانسلرانجیلا مرکل کو جرمنی ہی نہیں پورے یورپ کی نمائندہ سیاست دان کہا جاتاہے.

برطانوی وزیر اعظم ٹریسا مے کے ستارے آجکل اگرچہ گردش میں ہیں لیکن بریگزٹ کےمعاملے پرسیاسی دباؤ کا شکار ہونےکے باوجودحکومت پران کی گرفت اب بھی مضبوط ہے۔ناروے کی وزیر اعظم ایرنا سولوبرگ بھی کسی تعارف کی محتاج نہیں۔ فلاحی ریاست کے نام سے مشہور اس ملک میں عوام کی زندگی تو بہت سہل ہے مگر سیاستدان کے لیے قدم قدم پر بڑے چیلنجز ہیں۔اسکے باوجود ایرنا 2013سے ابتک ایک کامیاب وزیر اعظم کےطورپراپنی دھاک بٹھا چکی ہیں۔