سعودی ولی عہد نے ایران کے ساتھ جنگ ناگزیر قرار دے دی


ریاض (24 نیوز) سعودی ولی عہد نے ایران کے ساتھ جنگ ناگزیر قرار دے دی۔ شہزادہ محمد بن سلمان نےعالمی برادری سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ایران پر سیاسی اور اقتصادی دباؤ ڈالے تا کہ خطّہ میں عسکری مقابلہ سے گریز کیا جا سکے۔

غیر ملکی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کا کہنا تھا کہ کہ عسکری تنازع سے اجتناب میں کامیاب نہ ہو سکے تو غالب گمان ہے آئندہ 10 سے 15 برسوں کے دوران ایران کے ساتھ انھیں جنگ میں کودنا پڑے گا۔

یمن کی جنگ کے بارے میں سعودی ولی عہد نے کہا کہ اگر وہ 2015ء میں مداخلت نہ کرتے تو یمن حوثیوں اور القاعدہ کے درمیان تقسیم ہو چکا ہوتا۔

 یہ بھی پڑھئے: سعودی ولی عہد نے امریکی لباس پہننا شروع کر دیا

محمد بن سلمان نے حوثیوں کی جانب سے سعودی عرب پر میزائل داغے جانے کو ’کمزوری کی علامت‘ قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ لوگ ڈھیر ہونے سے پہلے انتہائی حد تک کارروائیاں کرنا چاہتے ہیں۔