خیبرپختونخوا میں 84 چوکیاں اورتھانے آج بھی کرائے کی عمارتوں میں قائم

خیبرپختونخوا میں 84 چوکیاں اورتھانے آج بھی کرائے کی عمارتوں میں قائم


پشاور(24نیوز) خیبرپختونخوا میں پولیس اصلاحات کے دعوے دھرے رہ گئے، صوبے میں 84 چوکیاں اورتھانے آج بھی کرائے کی عمارتوں میں قائم ہیں۔

 تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخواکے30فیصد سے زائد پولیس تھانے اور چوکیاں اب بھی سرکاری عمارتوں سے محروم ہیں۔ صوبہ میں 20 تھانے، 51پولیس چوکیاں اورچارسدہ پولیس لائن سمیت 84 دفاتر کرایہ کی عمارتوں میں قائم ہیں۔محکمہ پولیس کی جانب سے ان عمارتوں کانہ صرف لاکھوں روپےکرایہ ادا کیا جاتا ہے بلکہ ان عمارتوں میں فرائض انجام دینے والے پولیس اہلکاربھی غیر محفوظ سمجھےجاتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:اسلام آباد بحریہ کالج کی طالبات کا استاد پر جنسی ہراسانی کا الزام

 خیبرپختونخوامیں پانچ سال تک تبدیلی کےنام حکمرانی کرنے والی تحریک انصاف حکومت بھی پولیس اصلاحات کا دعوی کرتی رہی۔ مگرپولیس کے لیے سرکاری عمارتیں قائم کرنےمیں کامیاب نہ ہوسکی۔