24نیوز پر اسحاق ڈار کی زندگی کا سب سے بڑا انٹرویو

24نیوز پر اسحاق ڈار کی زندگی کا سب سے بڑا انٹرویو


لندن(24نیوز) سابق وزیرخزانہ اسحاق ڈار نے اپنی زندگی کر سب سے بڑا انٹرویو دے دیا جس میں انہوں نے اپنی حکومت کی غلطیوں کا اعتراف کرلیا،اسحاق ڈار نے ٹونٹی فور نیوز کے پروگرام نسیم زہرہ ایٹ 8 میں اہم سوالوں کا جواب دیا۔

 لندن میں نسیم زہرہ کو انٹرویو میں سابق وزیر خزانہ دل کھول کر بولے، کہا انہیں سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جارہا ہے، جس کا آغاز ڈان لیکس سے ہوا جو دو تین لوگوں کا مسئلہ تھا ادارے کا نہیں۔اسحاق ڈار نے بتایا  کہ جب عمران خان کا دھرنا وزیراعظم ہاؤس پہنچا تو استعفےکا  کہا  گیا اور ایسا ہی  پیغام الیکشن سے قبل بھی موصول ہوا۔

اسحاق ڈار نے کہا کہ میرے خلاف کیس ذاتی عناد کی بنیاد پر چل رہا ہے، جےآئی ٹی کے والیم گیارہ میں تین صفحے پلانٹیڈ ہیں۔اسحاق ڈار نے بڑے دل کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنی حکومت کی بڑی غلطیوں کو تسلیم کیا،اور کہا نیب کی خامیاں دور نہ کرنا غلطی تھی۔

رہنما مسلم لیگ ن نے کہا کہ پاسپورٹ منسوخ کردیا گیا، کوئی ٹریول ڈاکومنٹ نہیں،علاج کے بعد واپس وطن جاؤں گا۔ اسحاق ڈار کا کہنا تھا کچھ عالمی قوتیں پاکستان کو مستحکم نہیں دیکھنا چاہتیں، جو کہتے تھے خود کشی کرلوں گا بھیک نہیں مانگوں گا آج مانگ رہے ہیں۔

اسحاق ڈار نے خانسامے کے گرفتار ہونے سے متعلق کیا کہا جانئے اس ویڈیو میں۔۔۔

ڈان لیکس سے متعلق انھوں نے کیا کہا، اس ویڈیو میں ملاحظہ فرمائیں۔۔۔

اسحاق ڈار سے جب اینکر پرسن نسیم زہرہ نے ان سے پوچھا کہ کیا آپ معصوم ہیں تو اس پر انھوں کیا کہا ۔۔۔

جنرل راحیل شریف کے بارے میں سابق وزیر خزانہ کیا رائے رکھتے ہیں، اس ویڈیو میں ملاحظہ کریں۔۔۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔