کشمیر میں بھارتی درندگی کی انتہا،شہداءکی تعداد 17ہوگئی


سری نگر( 24نیوز )مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی سفاکانہ ریاستی دہشت گردی کے نتیجے میں 17 کشمیریوں کی شہادت اور 100 سے زائد کے زخمی ہونے کے بعد حریت قیادت کی کال پر وادی میں آج بھی مکمل ہڑتال ہے۔
واضح رہے کہ گذشتہ روز بھارتی فورسز نے مقبوضہ کشمیر کے ضلع اننت ناگ اور شوپیاں میں بربریت کا مظاہرہ کرتے ہوئے سرچ آپریشن کے بہانے کشمیریوں پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں اب تک 17نوجوان شہید ہوچکے ہیں،جبکہ احتجاج کے لیے باہر نکلنے والوں پر گولیاں اور پیلٹ گن سے فائر کیے گئے، جس کے نتیجے میں 100 سے زائد کشمیری زخمی ہوگئے۔
نوجوانوں کی میتیں گھروں کو پہنچنے پر غم و غصے کی لہر دوڑ گئی اور جنوبی حصے سے شروع ہونے والا احتجاج کا سلسلہ پوری وادی میں پھیل گیا اور احتجاج میں شریک ہونے کے لیے مسجدوں کے لاوڈ اسپیکرز سے باقاعدہ اعلانات کیے گئے،تاہم بھارتی فوج نے سرچ آپریشن پر ہی اکتفا نہیں کیا بلکہ جنازوں میں شریک نہتے افراد پر اندھا دھند گولیاں اور پیلٹ گن سے فائر کیے گئے، جس کے نتیجے میں 100 سے زائد کشمیری زخمی ہوگئے۔
کشمیری نوجوانوں کے قتل پر حریت قیادت نے 2 روزہ ہڑتال کا اعلان کیا تھا،علاوہ ازیں ضلع شوپیاں میں انٹرنیٹ سروس بھی بند کردی گئی ہے،کشمیری میڈیا کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں آج اسکول اور کالج بھی بند ہیں جبکہ امتحانات ملتوی کردیئے گئے ہیں۔

مقبوضہ وادی کشمیر لہو لہو، بھارت کا وحشیانہ ظلم و بربریت جاری
مقبوضہ کشمیر میں بدترین بھارتی دہشت گردی پر پاکستان کی جانب سے شدید مذمت کی گئی ہے،وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے بھارتی ریاستی دہشت گردی اور کشمیریوں کے قتل عام کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ظلم اور جبر سے حق خود ارادیت کی جدوجہد کو روکنا ممکن نہیں،مقبوضہ کشمیر میں ایک درجن سے زائد کشمیری نوجوانوں کی شہادت پر وزیراعظم نے اپنے بیان میں کہا کہ عوام کی جدوجہد آزادی کو دہشت گردی سے نہیں جوڑا جاسکتا اور ظلم و جبر سے حق خودارادیت کو نہیں دبایا جاسکتا،وزیراعظم نے کہا کہ بھارت اقوام متحدہ کے فیکٹس فائنڈنگ مشن کو مقبوضہ کشمیر جانے کی اجازت دے اور یو این سیکرٹری جنرل کشمیر کے لیے خصوصی نمائندہ مقرر کریں۔

وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ بھارت ریاستی دہشت گردی کے ذریعے نوجوان کشمیری نسل ختم کرنے کے درپے ہے، کشمیر کو خون میں نہلا دیا گیا ہے،ان کا کہنا تھا کہ بھارت ریاستی دہشت گردی کے ذریعے کشمیر کی نوجوان نسل ختم کرنے کے در پے ہے لیکن پاکستان اس آزمائش میں کشمیریوں کے ساتھ کھڑا ہے۔
وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے بھی بھارتی دہشت گردی کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ کشمیری عوام کی سیاسی، اخلاقی اور سفارتی حمایت جاری رکھیں گے۔چیئرمین کشمیر کونسل ای یونے کہا ہے کہ عالمی برادری کشمیریوں کی نسل کشی بند کرائے، علی رضا سید نے میڈیا سے گفتگو میں مطالبہ کیا کہ عالمی برادری کشمیریوں کی نسل کشی بند کرائے، مقبوضہ کشمیر میں بےگناہ شہریوں پر بھارتی بربریت قابل مذمت ہے، مسئلہ کشمیر کے منصفانہ حل تک جدوجہد جاری رکھیں گے۔
کشمیر کمیٹی کے چیئرمین مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ سے خیر کی توقع نہ رکھی جائے اور اسلامی کانفرنس خود مسئلے کے حل کیلئے آگے بڑھے اور عملی اقدامات کرے۔

اظہر تھراج

صحافی اور کالم نگار ہیں،مختلف اخبارات ،ٹی وی چینلز میں کام کا وسیع تجربہ رکھتے ہیں