عاصمہ قتل کیس: قبائلی جرگہ کا ملزم کو عبرتناک سزا دینے کا مطالبہ


لکی مروت، کوہاٹ (24 نیوز) عاصمہ قتل کیس سے متعلق قبائلی جرگہ نے ملزم کو عبرتناک سزا دینے کا مطالبہ کر دیا۔ کوہاٹ میں مرکزی ملزم مجاہد آفریدی کے بھائی صادق اللہ کے ریمانڈ میں مزید ایک روز کا اضافہ کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق عاصمہ قتل کیس سے متعلق لکی مروت میں قبائلی جرگہ ہوا جس میں نے 33 رکنی کمیٹی تشکیل دے دی۔ کمیٹی آئی جی خیبر پختونخوا اور دیگر حکام سے ملاقات کرے گی۔

جرگہ میں مطالبہ کیا گیا کہ ملزم کو فوری گرفتار کر کے عبرتناک سزا دی جائے۔ عاصمہ کے اہل خانہ کے لیے امدادی پیکج بھی دیا جائے۔

دریں اثنا مقتولہ عاصمہ رانی کے والد کا کہنا تھا کہ انھیں کھربوں روپے بھی دے دیں تو وہ اپنی بیٹی کا خون معاف نہیں کریں گے۔

علاوہ ازیں کوہاٹ میں عاصمہ قتل کیس میں نامزد ملزم صادق اللہ کو 3روزہ ریمانڈ ختم ہونے پرعدالت میں پیش کیا گیا۔ عدالت نے ملزم کو مزید 1روز کے ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کر دیا۔

واضح رہے کہ صادق اللہ عاصمہ قتل کیس کے مرکزی ملزم مجاہد آفریدی کا بھائی ہے۔

ڈی پی او کوہاٹ کے مطابق صادق اللہ کی نشاندہی پر برآمد کیا گیا پستول فرانزک لیب بجھوا دیا گیا۔ فرانزک لیب میں پستول اور جائے وقوعہ سے برآمد ہونے والے خول کا موازنہ کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ مرکزی ملزم مجاہد آفریدی بیرون ملک فرار ہے جبکہ اس کا شناختی کارڈ بلاک کر دیا گیا ہے۔