مطالبات پورے نہیں ہوئے، خادم رضوی نے ایک بار پھر دھرنا دے دیا


 لاہور(24نیوز)  تحریک لبیک کادھرنا داتا دربار کے سامنے جاری ہے۔ دھرنےکےباعث شہربھرمیں ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو کررہ گیا۔ شہر کی اکثرشاہراہوں پرگاڑیوں کی لمبی قطاریں لگی رہیں۔

 تفصیلات کے مطابق تحریک لبیک یا رسول اللہ نے داتا دربار کے سامنے دھرنا دے دیا۔ دھرنے میں کارکنوں کی کثیر تعداد شریک ہے۔ علامہ خادم حسین رضوی کا کہنا ہے کہ فیض آباد دھرنا جن مطالبات پر ختم کیا گیا تھا وہ پورے نہیں کیے گئے۔انتخابی اصطلاحات میں ترمیم کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی گئی نہ ہی ہمارے کارکنوں کو شہید کرنے والوں کو گرفتار کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں:لاہور؛اورنج لائن ٹرین منصوبہ ایک اور جان نگل گیا

 خادم حسین رضوی نے حکومت کو کل تک کی مہلت دیتے ہوئے جسٹس باقر نجفی کی رپورٹ منظر عام پر لانےکا بھی مطالبہ کردیا۔دوسری جانب تحریک لبیک کےکارکنوں نےداتا دربار کے اطراف میں راستوں کو سیل کر دیا جس کی وجہ سے ملحقہ علاقوں میں ٹریفک نظام تباہ ہو کر رہ گیا۔ بیشتر شاہراہوں پر بدترین ٹریفک جام کی وجہ سے شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔