ورکنگ گروپس کا پہلا اجلاس ، پاکستانی وفد کابل پہنچ گیا


کابل (24نیوز) پڑوسی ممالک کی پاکستان کے خلاف تمام چالیں ناکام ہو گئیں، پاک افغان ورکنگ گروپس کے پہلے اجلاس میں شرکت کے لئے پاکستانی وفد کابل پہنچ گیا، مزاکرات میں فوجی و انٹیلی جینس ،راہداری اور تجارت پر بھی بات چیت ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق پاک افغان ورکنگ گروپس کے پہلے اجلاس میں شرکت کےلئے سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ کی سربراہی میں پاکستانی وفد کابل پہنچ گیا، ڈی جی ایم او میجر جنرل ساحر شمشاد سمیت اعلی حکام وفد میں شامل ہیں۔

 پاک، افغان ورکنگ گروپس کا پہلا اجلاس کچھ دیر میں کابل میں شروع ہو گا،سیکرٹری خارجہ کے ہمراہ سفارتی و عسکری حکام بھی وفد کا حصہ ہیں، پاکستانی وفد سخت سیکورٹی میں ہوائی اڈے سے پاکستان ہاوس پہنچا۔

ذرائع کے مطابق پاکستانی سفیر مذاکرات سے قابل وفد کو بریفنگ دیں گے، پاکستان اور افغانستان کے مابین طویل عرصہ بعد مذاکرات ہونے جا رہے ہیں، فوجی و انٹیلی جینس تعاون، انسداد دہشت گردی کے امور پر بات چیت ہو گی۔

افغان مہاجرین کی وطن واپسی، تجارت، معیشت، راہداری، ربط اور دیگر امور بھی شامل ہوں گے, پاک افغان حکام سرحدی دراندازی کی روک تھام کے امور پر بھی غ