پاکستان اور امریکہ میں قربتیں بڑھنے لگیں


نیو یارک( 24نیوز ) پاکستان اور امریکا نے باہمی تعلقات،علاقائی استحکام اور مسائل کے حل کیلئے باہمی روابط اور مذاکرات جاری رکھنے پر اتفاق کرلیا۔

اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے بعد دو طرفہ دورے پر وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی پر پہنچے جہاں انھوں نے امریکی حکام سے ملاقاتیں کیں۔

اس سلسلے کی سب سے اہم ملاقات امریکہ محکمہ خارجہ میں ہونے والی پاک امریکہ وزرائے ملاقات تھی، اعلامیہ کے مطابق وسیع البنیاد دو طرفہ باہمی اور علاقائی امور پر تبادلہ خیال کیا گیا،ملاقات میں وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کی معاونت سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ اور پاکستانی سفیرعلی جہانگیر صدیقی نے کی۔

اس موقع پر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ افغانستان میں طاقت کا استعمال نتائج دینے میں ناکام ثابت ہوا، جنوبی ایشیا میں امن کا خواب کشمیر سمیت تمام تصفیہ طلب مسائل کے حل کے بغیر پورا نہیں ہوسکتا۔

امریکی وزیرخارجہ مائیک پمپیو نے کہا کہ امریکا پاکستان کی نئی حکومت کیساتھ کام کرنے کیلیے تیار ہے۔ حکومت کو اپنا اصلاحاتی ایجنڈے پر عملدرآمد میں معاونت کریں گے۔ امریکہ افغان مفاہمتی عمل کی حمایت پر پاکستان کو سراہتا ہے۔

دونوں ممالک نے مذاکرات کے ذریعے افغانستان میں امن و استحکام کے حصول کو بہتر موقع قرار دیا۔ وزیر خارجہ سے امریکی مشیرقومی سلامتی سمیت کئی سینیٹرز اورکانگریس ارکان نے بھی ملاقاتیں کیں۔

یاد رہے پاکستان اور امریکہ کے درمیان تعلقات کافی عرصے سے تعطل کا شکار ہیں،امریکہ نے پاکستان کی فوجی امداد بند کررکھی ہے۔