پاکستانی ہوجائیں تیار، جلد پانی کا قحط آسکتا ہے، ماہرین

پاکستانی ہوجائیں تیار، جلد پانی کا قحط آسکتا ہے، ماہرین


اسلام آباد (24 نیوز) موسمیاتی تبدیلیاں ماحول کے لیے خطرہ بن گئی ماہرین کو سب سے زیادہ پانی کی فکر ستانے لگی، پانی کے وسائل کو بچانے کے لیے ہر فرد کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا، پاکستان میں ڈیم اور جنگلات کو بڑھانے کی ضرورت ہے۔

24 نیوزذرائع کے مطابق ماحولیاتی تبدیلی پانی کی کمی اور جنگلات کی کٹائی کو کم کرنے کے حوالے سے اسلام آباد کے ایک مقامی ہوٹل میں پرگرام کا انعقاد کیا گیا۔ تقریب میں مختلف ممالک کے ماہرین نے شرکت کی۔

ماہرین نے پاکستان میں پانی کے کم ہوتے ہوئے ذخائر پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اگر اس معاملے سے بر وقت نا نمٹا گیا تو اس کے ملک پر منفی اثرات مرتب ہو سکتے ہیں۔

ماہرین کہا کہنا تھا کہ ماحولیاتی تبدیلی، آبادی میں اضافہ اور انسانی رویوں میں تبدیلی کی وجہ سے آنے والے وقت مین پانی کی طلب بڑھ جائے گی۔ ماہرین نے خبردار کیا کہ اگر بہتر اقدامات نہ کیے گئے تو پانی کی قلت سے صنعت، زراعت سمیت متعدد شعبے تباہ ہو جائیں گے۔ جس سے ملک میں قحط کا خطرہ پیدا ہو سکتا ہے۔

 مقررین کا کہنا تھا کہ زمین ہمارا گھر ہے اور اس گھر کو ٹھیک رکھنے کی ہمیں ضرورت ہےاسلام آباد میں اس وقت 70 فیصد کنکریٹ ہے۔ جبکہ صرف 30 فیصد جنگلات موجود ہیں کنکریٹ کی وجہ سے درجہ حرارت بھی بڑھ جاتا ہے۔

صدر چیمبر آف کامرس کا کہنا تھا کہ جنگلات سے ہمیں بہت فائدے ہوتے ہیں۔ احمد کمال کا کہنا تھا کہ پاکستان میں پانی کی کمی بھی بڑھتی جا رہی ہے جس کہ وجہ پاکستان میں ڈیموں کا نا بننا ہے۔  ان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان میں پانی کی سطح کم ہو رہی ہے اور آبادی بڑھتی جا رہی ہے جس کے بارے میں ہمیں اقدامات کرنے ہوں گے۔