مولانا فضل الرحمان بھارت،امریکا اور اسرائیل کے خلاف میدان میں آگئے

مولانا فضل الرحمان بھارت،امریکا اور اسرائیل کے خلاف میدان میں آگئے


اسلام آباد(24نیوز) مولانا فضل الرحمان نے بھارت، امریکا اور اسرائیل کے خلاف جمعہ کو یوم احتجاج منانے کا اعلان کردیا، انھوں نے کہا کہ آج تک طے نہیں کرسکے کہ کشمیر کا حل فوجی ہے یا سیاسی ، مسئلہ کشمیر حل کرنے میں سیاستدانوں کے ہاتھ کیوں باندھ دیئے جاتے ہیں ۔

کشمیر کمیٹی کے چیئرمین مولانا فضل الرحمان نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ عالم اسلام اور خطہ کشمیر میں مسلمانوں کی زندگی کو اجیرن بنا دیا گیا ہے، فلسطین میں نہتے عوام پر گولہ باری ہوتی ہے، افغان صوبہ قندوز میں 150 بچے شہید کردئے گئے۔

یہ بھی پڑھیں: عمران خان بھی نواز شریف کی ایکسٹینشن ہے

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ کشمیر کمیٹی پر سوال اٹھانے والے جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی کا اجلاس نہ ہونے کا کیوں نہیں پوچھتے؟ آج تک یہ طے نہیں کرسکے کہ کشمیر کا حل فوجی ہے یا سیاسی، غیر سنجیدگی سے اپنا ہی نقصان ہوگا، کسی کے منہ پر کالک مل دینا پارلیمنٹ پر کالک ملنا ہے۔ مسئلہ کشمیر حل کرنے میں سیاستدانوں کے ہاتھ کیوں باندھے جاتے ہیں ۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ معاملات بکھیرنا نہیں سمیٹنا چاہتے ہیں، اداروں کو اتنا شتر بے مہار نہیں ہونا چاہیے، انہوں نے کہا کہ اسرائیل کی کوئی تاریخ نہیں، جہاں یہ ملک ہے اس کا نام پہلے فلسطین ہی تھا۔