پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں مندی ، سرمایہ کاروں کے اربوں روپے ڈوب گئے

پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں مندی ، سرمایہ کاروں کے اربوں روپے ڈوب گئے


کراچی(24نیوز) گورنر اسٹیٹ بینک اور حکومت کی اقتصادی ٹیم میں تبدیلیوں کے بعد بھی اسٹاک مارکیٹ کی مندی ختم نا ہو سکی. پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں مندی برقرار رہی، ہنڈرڈ انڈیکس پانچ سو سے زائد پوائنٹ گر گیا. سرمایہ کاروں کے 82 ارب روپے ڈوب گئے۔

ہفتے کے پہلے روز اسٹاک مارکیٹ میں کاروبار کے منفی آغاز کے بعد تھوڑا اتار چڑھاؤ دیکھا گیا لیکن فروخت کے دبائو سے مندی بڑھتی ہی رہی،  کاروبار کے اختتام پر ہنڈرڈ انڈیکس پانچ سو سترہ پواینٹ کی کمی سے پینتیس ہزار چھ سو پانچ پر بند ہوا۔ مجموعی طور پر سات کروڑ چودہ لاکھ شئیرز کا کام ہوا۔  تین سو انتیس کمپنیوں کے شئیرز کا کاروبار ہوا۔ صرف ساٹھ کی قیمت میں اضافہ جبکہ دو سو پچاس کی قیمت کم ہوئی۔

شئیرز کی مجموعی مالیت اکاسی ارب اکاسی کروڑ روپے کی کمی سے بہتر کھرب نوے ارب روپے رہ گئی۔ ملک میں غیریقینی اقتصادی اور سیاسی صورتحال کے باعث گزشتہ ہفتے کے دوران بھی مسلسل مندی کے باعث ہنڈرڈ انڈیکس میں 1008 پوائنٹ کی کمی رکارڈ کی گئی تھی۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔