روپیہ سستا باقی سب مہنگا

روپیہ سستا باقی سب مہنگا


کراچی(24نیوز) مہنگائی کے طوفان سے عوام بے حال ہوگئے۔عوام کو ریلیف دینے کے تمام دعوے حقیقت نہ بن سکے۔حکومت کی کارکردگی خدمت کی بجائے عوام پرزحمت بنی دکھائی دے رہی ہے۔

کوئی آٹے دال کےبھاؤسےپریشان تو کوئی بجلی گیس کےبل دیکھ کرحیران ہے۔مہنگائی کےطوفان نےعوام کو ہلا دیا۔حکومت نے آتے ہی گیس کی قیمتوں میں دو قسطوں میں گیس 160 فیصد تک مہنگی کی۔بجلی کی قیمت میں بھی 30 سے 40 فیصد اضافہ کردیا اورتواور علاج بھی سستانہ رہا۔کیوں کہ ادویات بھی 400 فیصد تک مہنگی کردی گئی ہیں۔یہی نہیں دال چاول آٹا اور غریب عوام کے استعمال کی ہر چیز قیمتیں بڑھا دی گئیں۔

حکومت کی آمد پر 127 روپے میں بکنے والا ڈالر بھی گزشتہ روز 148 کی انتہائی حد کو چھو گیا۔سونے کی قیمت بھی 72 ہزار روپے فی تولہ کی حد عبور کرچکی ۔بڑھی مہنگائی نے جہاں عام شہری کی آنسو نکلوا دیئے۔وہیں دکاندار بھی آگ بگولا نظر آتے ہیں۔عوام کا کہنا ہے کہ حکمرانوں 100دن گزرے بھی 100دن ہوگئےلیکن حالات بہترہونےکی بجائے بدترین ہوتےجارہے ہیں۔

ضرور پڑھیں:کھراسچ، 18 جون 2019

اب توگاڑیوں میں پٹرول بھی سوچ سمجھ کر ڈلوایا جاتا ہے۔رمضان میں شروع ہونےمیں ایک ماہ باقی ہے ۔رمضان کیسے گزرے گاسوچ سوچ کرعوام حالت مزیدپتلی ہوتی جارہی ہے۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔