لالچی باپ نے 500روپے میں 10 سالہ بیٹی اوباش کے حوالے کردی

لالچی باپ نے 500روپے میں 10 سالہ بیٹی اوباش کے حوالے کردی


قصور ( 24 نیوز )جب لالچ اور بدبختی کی سیاہ پٹی آنکھوں پر بندھ جاتی ہے تو انسان کو کچھ نظر نہیں آتا،ایسا ہی قصور کے ایک شخص کے ساتھ ہوا۔لالچ میں اندھے باپ نے  صرف 500 روپےمیں اپنی 10 سالہ بیٹی زیادتی کےلیے اوباش نوجوان کے حوالے کر دی۔

ایڈیشنل ایس پی قصور راشد ہدایت نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ پھولنگر کے گاؤں کھڑک سنگھ کے رہائشی اسماعیل نےصرف 500 روپے کی خاطر اپنی 10سالہ بیٹی کو زیادتی کےلیے 26 سالہ اوباش حنیف کے حوالے کر دیا۔ جب بچی  نے شور مچایا  تو لوگ اکٹھے ہو گئے جس پر والد اسماعیل اور حنیف دونوں فرار ہوگئے۔

بعدازاں بچی کو اسپتال منتقل کر دیا گیا اور ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے انہیں گرفتار کرلیا گیا۔ایڈیشنل ایس پی نے بتایا کہ ملزم حنیف کے خلاف ایک بچے سے بھی زیادتی کا مقدمہ پہلے ہی درج ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ برس سے پنجاب کے شہر قصور کے مختلف علاقوں میں بچوں کے ساتھ بڑھتے ہوئے زیادتی کے واقعات سامنے آرہے ہیں جس کے لیے پنجاب پولیس نے اس پر ریسرچ کی ضرورت کا بھی اعلان کیا تھا۔

Azhar Thiraj

Senior Content Writer